Chitral Times

Jun 14, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

عمران خان چترال میں سیاحت کے شعبے کی ترقی میں انتہائی دلچسپی رکھتے ہیں…وزیر زادہ

Posted on
شیئر کریں:

چترال(محکم الدین) چترال کے مختلف مقامات سے لوگوں کی حکمران پارٹی پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا سلسلہ جاری ہے ۔ گذشتہ روز بمبوریت کے معروف شخصیات سابق ایچ او عبدالقیوم اورمحمد یحیی نے باقاعدہ طور پر پی ٹی آئی میں شمولیت کااعلان کیا ۔ اس سلسلے میں ایک پروقار تقریب بمبوریت میں منعقد ہوئی ۔ جس میں ایم پی اے وزیرزادہ , جنرل سیکرٹری پی ٹئ آئی اسرار صبور , سابق تحصیل ناظم سرتاج احمد خان اور ناظم وی سی ایون مجیب الرحمن نے خصوصی طور پر شرکت کی ۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ناظم مجیب الرحمن نے کہا۔کہ 72سالوں سے جاری روایتی سیاست نے عوام کو عدل و انصاف دینے میں ناکام رہا ۔ اس لئے لوگ جوق درجوق پی ٹی آئی میں شامل ہو رہے ہیں۔ انہوں نے کہا ۔ پاکستان کے حکمرانوں نے غیر ملکی بینکوں کی تجوریاں بھریں۔ جس کی وجہ سے ملک آج دیوالیہ پن کا شکار ہے۔ انہوں نے کہا ۔ کہ پاکستانی قوم باشعور ہے ۔ جو عمران خان کی قیادت میں یہ معرکہ خوش اسلوبی سے سر کریں گے ۔ جنرل سیکرٹری تحریک انصاف اسرار صبور نے کہا ۔ کہ بمبوریت ویلی کے لوگوں نے پہلے بھی جنرل الیکشن میں تحریک انصاف کو منڈیٹ دیاہے ۔ اور آیندہ بھی یہاں کے لوگوں سے بھر پور تعاون کی امید ہے ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ یہ پی ٹی آئی قیادت کا ہم پر ایک مرتبہ اور احسان ہے ۔ کہ انہوں نے ہمیں نمایندگی دی ۔ اور ایم پی اے وزیر زادہ کی صورت میں چترال کا ایک با صلاحیت نمایندہ صوبائی اسمبلی میں موجود ہے ۔ سرتاج احمد خان نے کہا ۔ کہ ہم چترال کی تعمیروترقی کی خاطر عمران خان کے قافلے میں شامل ہو گئے ہیں ۔ اور ہم چترال کو ایک ابھرتا ہوا خوشحال چترال دیکھنا چاہتے ہیں۔ اور انشا اللہ ہم اس میں کامیاب ہوجائیں گے ۔ کیونکہ ہم میں کھوٹ نہیں ۔خدمت کا جذبہ موجود ہے ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ شمولیت کرنے والے بھائیوں کے ساتھ ان کے خاندانی گہرے تعلقات ہیں ۔ اور یہ ان ہی مراسم ہی کی وجہ ہے ۔ کہ ان کی درخواست پر وہ پی ٹی آئی میں شامل ہو گئے ہیں ۔ ایم پی اے وزیر زادہ نے شمولیت کرنے والوں کاشکریہ ادا کیا ۔ اور کہا ۔ کہ عمران خان چترال سے انتہائی محبت رکھتے ہیں۔ اور چترال کو ترقی دینے کیلئے سیاحت کے شعبے کی ترقی دینے میں انتہائی دلچسپی رکھتے ہیں ۔ یہ ان کی محبت ہی ہے کہ پچھلی اور اب کی حکومت میں چترال کو نمایندگی دی ۔انہوں نے کہا ۔ کہ چترال میں سیاحت کو فروغ دینے کیلئے صوبائی حکومت نے 15کروڑ اور بیوٹفیکیشن کیلئے 35کروڑ روپے منظور کئے ہیں ۔ جس سے سیاحوں کو سہولت دینے میں مدد ملے گی ۔ نتیجتا سیاحوں کی چترال آمد سے روزگار کے مواقع کھلیں گے ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ وہ پہلے اقلیتی نمایندے ہیں ۔ جنہوں نے گستاخانہ خاکوں کے خلاف اور امریکہ کے خلاف مزمتی قرارداد اسمبلی میں پیش کی ۔ انہوں نے کہا ۔ کہ میں اقلیتوں کاہی نہیں, چترال کا بھی ایم پی اے ہوں ۔ اور میری کوشش ہو گی کہ چترال کو ترقی کی راہ پر گامزن کرنے کا خواب شرمندہ تعبیر ہو۔


شیئر کریں:
Posted in تازہ ترین, چترال خبریںTagged
17313