Chitral Times

Apr 21, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

اکنامک زون کی کمرشل لانچنگ کیلئے تمام متعلقین اپنی ذمہ داریوں کی بروقت تکمیل کو یقینی بنائیں۔وزیراعلی

شیئر کریں:


پشاور ( چترال ٹائمز رپورٹ ) وزیر اعلی خیبر پختونخوا محمود خان نے رشکئی اسپیشل اکنامک زون کو قومی اہمیت کا حامل اور صوبائی حکومت کا اہم ترجیحی منصوبہ قرار دیتے ہوئے متعلقہ حکام کو ہدایت کی ہے کہ اس اکنامک زون میں سرمایہ کاری کے لئے زیادہ سے زیادہ غیر ملکی سرمایہ کاروں کو راغب کرنے جبکہ مقامی اور غیر ملکی سرمایہ کاروں کے اشتراک کار کے لئے جوائینٹ ونچرز کی تشکیل پر خصوصی توجہ دی جائے اور مذکورہ اکنامک زون کی کمرشل لانچنگ کے لئے تمام متعلقہ ادارے اور شراکت دار اپنی ذمہ داریوں کی بروقت تکمیل کو یقینی بنائیں۔ وہ گزشتہ روز رشکئی اسپیشل اکنامک زون کے حوالے سے ایک اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ وزیر اعلی کے معاون خصوصی برائے صنعت عبدالکریم خان، سیکرٹری صنعت جاوید مروت، خیبر پختونخوا بورڈ آف انوسٹمنٹ اینڈ ٹریڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر مبشر حسن داود، اسپیشل اکنامک زونز ڈیویلپمنٹ اینڈ منیجمنٹ کمپنی کے سربراہ جاوید خان اور دیگر متعلقہ حکام کے علاوہ چینی تعمیراتی کمپنی چائینہ روڈ اینڈ برج کمپنی کے حکام نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔

اجلاس کو رشکئی اسپیشل اکنامک زون کے سنگ بنیاد رکھنے کے لئے اب تک کی پیشرفت پر بریفنگ دی گئی اور بتایا گیا کہ رشکئی اکنامک زون تک رابطہ سڑکوں کی تعمیر کے علاوہ گیس اور بجلی کی فراہمی اور دیگر بنیادی انفراسٹرکچر کا کام مکمل کر لیا گیا ہے جبکہ تعمیراتی کمپنی کی ٹیم سائٹ پر پہنچ چکی ہے اور سلسلے میں وفاقی حکومت کی طرف سے ادائیگیاں بھی کی جاچکی ہیں۔

اجلاس کو بتایا گیا کہ صوبے میں قائم کئے جانے والے اکنامک زونز میں سرمایہ کاری کرنے کے خواہشمند غیر ملکی سرمایہ کاروں کے لئے متعدد مراعات دی جارہی ہیں جن میں مشینری کی درآمد پر ڈیوٹی میں چھوت اور صوبائی ٹیکسز میں چھوٹ شامل ہیں۔ اجلاس کو یہ بھی بتایا گیا کہ رشکئی اکنامک زون کے حوالے سے صوبائی اور وفاقی حکومت اپنی ذمہ داریاں بروقت پوری کرچکی ہیں۔ اجلاس میں رشکئی اکنامک زون میں صنعتیں لگانے کے لئے غیر ملکی سامایہ کاروں کو راغب کرنے کے لئے بیرون ملک خصوصا چین میں رشکئی اکنامک زون کی بڑے پیمانے پر مارکیٹنگ کی ضروت پر زور دیتے ہوئے تعمیراتی کمپنی چائینہ روڈ اینڈ برج کمپنی کو ہدایت کی گئی کہ وہ مارکیٹنگ کے عمل کو مزید تیز اور وسیع کرے۔

چائینہ روڈ اینڈ برج کمپنی کے حکام کی طرف سے اجلاس کو بتایا گیا کہ چینی حکومت اور پاکستان میں چینی سفارتخانہ چین میں رشکئی اکنامک زون کی مارکیٹنگ مکمل تعاون فراہم کر رہے ہیں، متعدد چینی سرمایہ کاروں نے اس اکنامک زون میں صنعتیں لگانے کے خواہش کا اظہار بھی کیا ہے اور کورونا کی صورتحال بہتر ہوتے ہی چینی صنعتکاروں کا وفد رشکئی اکنامک زون کا دورہ کرے گا۔ اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعلی نے رشکئی اسپیشل اکنامک زون کو صوبے میں صنعتی اور تجارتی سرگرمیوں کے فروع کے لئے ایک فلیگ شپ منصوبہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس منصوبے کی تکمیل سے بین الاقوامی تجارت کو فروغ ملے گا، صنعتی سرگرمیوں میں اضافہ ہوگا، مقامی لوگوں کو روزگار کے نئے مواقع میسر آئیں گے اور صوبے کی معیشت کو مستحکم بنانے میں مدد ملے گی۔ وزیر اعلی نے کہا کہ اس منصوبے کی اہمیت کے پیش نظر اس کی بروقت تکمیل میں کسی بھی قسم کی کوتاہی اور سستی برداشت نہیں کی جائے گی۔
<><><><><><>

دریں اثنا وزیر اعلی خیبر پختونخوا محمود خان نے کورونا سے متاثرہ میڈیکل آفیسر ڈاکٹر صدام دلاور خان کی وفات پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے لواحقین سے تعزیت کی ہے۔ یہاں سے جاری اپنے تعزیتی بیان میں وزیر اعلی نے اہل خانہ سے دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے مرحوم کی معفرت اور پسماندگان کے لئے صبر جمیل کی دعا کی ہے۔ وزیر اعلی نے کورونا کی صورتحال میں ڈاکٹر کمیونٹی کی خدمات کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹروں سمیت دیگر طبی عملے نے دوسروں کی جانیں بچانے کے لئے گرانقدر خدمات انجام دے رہے ہیں اور صوبائی حکومت ان کی خدمات اور قربانیوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے۔ درایں اثناء وزیر اعلی نے مردان میں کرشنگ پلانٹ میں دھماکے کے نتیجے میں تین مزدوروں کے جان بحق ہونے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے لواحقین سے تعزیت کی ہے۔ یہاں سے جاری اپنے تعزیتی بیان میں وزیر اعلی نے نے متاثرہ خاندانوں سے دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے مرحومین کی مغفرت اور پسماندگان کے لئے صبر جمیل کی دعا کی ہے۔


شیئر کریں: