Chitral Times

May 23, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

اگلے مالی سال کے بجٹ میں لیور ٹرانسپلانٹ کی سہولت کو صحت کارڈ پلس اسکیم میں شامل کیا جائیگا۔وزیراعلیٰ

شیئر کریں:


پشاور ( چترال ٹائمز رپورٹ ) وزیر اعلی خیبر پختونخوا محمود خان نے صحت کارڈ پلس اسکیم کو قومی سطح پر ایک فلیگ شپ منصوبہ قرار دیتے ہوئے متعلقہ حکام ہدایت کی ہے کہ عوامی فلاح و بہبود کے اس اہم منصوبے کے بارے عوام کو زیادہ سے زیادہ آگہی دینے اور انہیں اس اسکیم میں شامل علاج معالجے کی سہولیات اور مقرر کردہ ہسپتالوں کے بارے میں تفصیلی معلومات فراہم کرنے کے لئے اس کی موثر تشہیر کی جائے۔ وزیر اعلی محکمہ اطلاعات اور صحت کے حکام کو ہدایت کی ہے کہ وہ اس سلسلے میں بڑے پیمانے پر آگہی مہم شروع کرنے کے لئے قابل عمل حکمت عملی تیار کریں اور اس مقصد کے لئے سوشل میڈیا پلیٹ فارمز کے موثر استعمال پر خصوصی توجہ مرکوز کریں۔ وہ جمعرات کے روز صحت کارڈ پلس اسکیم سے متعلق ایک اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔

صوبائی وزراءتیمور سلیم جھگڑا، اکبر ایوب اور وزیر اعلی کے معاون خصوصی کامران بنگش کے علاوہ محکمہ صحت اور اطلاعات کے اعلی حکام نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔ وزیر اعلی نے کہا کہ صحت کارڈ پلس اسکیم پاکستان تحریک انصاف حکومت کا صحیح معنوں میں ایک عوام دوست منصوبہ ہے جس کے تحت صوبے کی سو فیصد آبادی کو بلا تفریق علاج معالجے کی مفت سہولیات فراہم ہو رہی ہیں، صوبائی حکومت وسیع تر عوامی مفاد میں اس اس اسکیم کو مزید جامع بنانے کے لئے مزید بیماریوں کے علاج کو بھی اس اسکیم میں شامل کرنے پر کام کر رہی ہے ، اگلے مالی سال کے بجٹ میں لیور ٹرانسپلانٹ کی سہولت کو اس اسکیم میں شامل کیا جائے گا جبکہ سرکاری ملازمین کے لئے او پی ڈی سروز کو بھی اسکیم میں شامل کرنے کا معاملہ بھی زیر غور ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس اسکیم کی افادیت اور اہمیت کے پیش نظر عوام کو اس کے بارے میں زیادہ سے زیادہ معلومات کی فراہمی کی ضرورت ہے تاکہ عوام اسے زیادہ سے زیادہ مستفید ہو سکیں۔ وزیر اعلی نے مزید ہدایت کی صوبے کے مختلف علاقوں کے عوام کو اس اسکیم کے بارے میں مقامی زبانوں میں فراہم کرنے کے لئے خصوصی اقدامات کئے جائیں۔
<><><><><><><>


دریں اثنا وزیراعلی خیبر پختونخوا محمود خان ہفتے کے روز آئی جی پی ہاوس گئے جہاں انہوں انسپکٹر جنرل پولیس ڈاکٹر ثناءاللہ عباسی سے ان کے بھائی کے انتقال پر تعزیت اور فاتحہ خوانی کی۔وزیر اعلی نے لواحقین سے ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے مرحوم کی مغفرت اور پسماندگان کے لئے صبر جمیل کی دعاکی ہے۔


شیئر کریں: