Chitral Times

Jun 12, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

پی آئی اے کا یوم آزادی کے موقع پر دبئی سے براہ راست سکردو کیلئے پروازوں کا آغاز

شیئر کریں:

پی آئی اے کا یوم آزادی کے موقع پر دبئی سے براہ راست سکردو کیلئے پروازوں کا آغاز

اسلام آباد(چترال ٹایمزرپورٹ )پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن(پی آئی اے) یوم آزادی کے موقع پرسکردو کیلئے دبئی سے براہ راست پروازوں کا آغاز کررہی ہے۔پی آئی اے کے ترجمان عبداللہ حفیظ خان کی طرف سے جاری بیان کے مطابق سکردو ایئرپورٹ پر یوم آزادی کے کے موقع پر دبئی سے آنے والی پرواز پہلی بین الاقوامی پرواز ہوگی جس کے استقبال کیلئے تمام تر تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔انہوں نے کہاکہ اس تاریخی پرواز پر سفر کرنے والوں میں سیاحوں کی ایک بڑی تعداد شامل ہوگی جوشمالی علاقہ جات کے پرکشش مقامات کے نظاروں سے لطف اندوز ہوسکے گی۔ انہوں نے کہاکہ ہوابازی کے شوقین افراد مذکورہ پرواز میں خصوصی دلچسپی لے رہے ہیں، پہلی پرواز پر مسافروں کو دنیا کی بلند ترین چوٹیوں اور دلکش جھیلوں کے نظارے کرائے جائیں گے۔ترجمان نے کہاکہ یہ پرواز دبئی سے سکردو اور وہاں سے اسلام آباد آئے گی جس میں سکردوکے علاوہ اسلام آباد کے مسافر بھی سفر کرسکیں گے۔

فوج، سیکیورٹی ادارے اور پاکستان کے عوام ایک ہیں، آرمی چیف

راولپنڈی(سی ایم لنکس)آرمی چیف جنرل عاصم منیر نے پشاور میں منعقدہ تاریخی گرینڈ جرگہ میں خصوصی طور پر شرکت کی۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق اس موقع پر اپنے خطاب میں جنرل عاصم منیر نے کہا کہ دنیا کی کوئی طاقت پاکستان کا کچھ نہیں کرسکتی۔ان کا کہنا تھا کہ فوج اور سیکیورٹی کے تمام ادارے اور پاکستان کی عوام ایک ہیں، جو لوگ امن کو برباد کرنا چاہتے ہیں وہ ہم میں سے نہیں ہیں۔سپہ سالار نے کہا کہ پاکستان ریاست مدینہ کے بعد کلمہ پر بننے والی دوسری ریاست ہے، اسلام سلامتی اور امن کا دین ہے، جنہوں نے اس دین کو دہشتگردی کی بھینٹ چڑھایا ہے ان کو جواب دینا پڑے گا۔جنرل عاصم منیر کا کہنا تھا کہ اگر مذکرات ہوئے تو وہ صرف پاکستان اور عبوری حکومت کے مابین ہوں گے، کسی بھی گروہ یا جتھے سے بات نہیں کی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ افغان مہاجرین کو پاکستان میں پاکستان کے قوانین کے مطابق رہنا ہوگا، آرمی چیف نے افغان حکومت کو مخاطب کرتے ہوئے سوال کیا کہ کیا احسان کا بدلہ احسان کے علاوہ کچھ اور بھی ہوسکتا ہے؟ان کا کہنا تھا کہ ہم اللہ کے راستے میں جہاد کر رہے ہیں اور کامیابی ہماری ہی ہوگی، پاک فوج کا مقصد اور نصب العین شہید یا غازی ہے۔آرمی چیف نے کہا کہ قبائل کے انضمام کے مسائل کے حل کیلئے ایک سیکریٹریٹ قائم کیا جائے گا، قبائلی عوام کی معاشی ترقی سے متعلق ترقیاتی منصوبوں میں ان کی شرکت یقینی بنائیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ نئے ضم شدہ اضلاع میں 81 ارب روپے کے ترقیاتی اور فلاح و بہبود کے منصوبے شروع کیے جائیں گے، ان اضلاع میں پولیس کے 43 منصوبوں کو 7 ارب روپے سے مکمل کیا جائے گا، زیر تعمیر منصوبوں کے جلد مکمل ہونے میں تمام تر مدد فراہم کی جائے گیانہوں نے کہا کہ دہشتگردی میں اضافہ دہشتگردوں کی مذاکرات دوبارہ شروع کرنے کی بیسود کوشش ہے، دہشتگردوں کے پاس ریاست کی رٹ کے سامنے سر تسلیم خم کرنے کے سوا کوئی چارہ نہیں۔جنرل عاصم منیر کا کہنا تھا کہ مسلح افواج کے خلاف دشمن قوتوں کے پروپیگنڈے سے قانون کے مطابق نمٹا جائے گا۔چیف آف آرمی اسٹاف نے پاک فوج، ایف سی، لیویز، خاصہ دار، پولیس اور جوانوں کو خراج تحسین پیش کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ خیبرپختونخوا پولیس ایک شاندار فورس ہے اور اس کی بے پناہ قربانیاں ہیں، شہدا کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی، پاکستان میں مکمل امن واپس آئے گا۔


شیئر کریں:
Posted in تازہ ترین, جنرل خبریں, گلگت بلتستانTagged
77650