Chitral Times

ملکی ترقی،خوشحالی ویکجہتی کیلئے اقلیتی برادری کا کردار قابل تحسین ہے،گورنر حاجی غلام علی

Posted on

ملکی ترقی،خوشحالی ویکجہتی کیلئے اقلیتی برادری کا کردار قابل تحسین ہے،گورنر حاجی غلام علی

آئین پاکستان میں اقلیتوں کی مکمل مذہبی آزادی اور تمام حقوق کا تحفظ یقینی بنایاگیاہے،گورنر
گورنرسے آرتھوڈکس چرچ کے 10رکنی نمائندہ وفد کی ملاقات، مسیحی برادری کی خدمات، درپیش مسائل پرتبادلہ خیال

 

پشاور ( چترال ٹایمز رپورٹ ) گورنرخیبرپختونخوا حاجی غلام علی نے کہاہے کہ اسلام اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ پر زور دیتا ہے،پاکستان میں اقلیتی برادری کو مکمل مذہبی آزادی اور مساوی حقوق حاصل ہے اور آئین پاکستان نے بھی اقلیتوں کے حقوق کا تحفظ یقینی بنایاگیاہے۔ امن واستحکام اور ملکی ترقی و خوشحالی کیلئے اقلیتی برادری کاکردار قابل تحسین ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گورنرہاوس پشاور میں انگلیکین ارتھوڈکس چرچ آف پاکستان کے پادریوں پرمشتمل 10 رکنی وفد سے ملاقات کے دوران کیا۔ وفد میں بشپ ارنسٹ جیکب، پادری رزاق کھوکھر، پادری شہزاد، پادری آصف پرویز، پادری شبیل ناصر، سمسن جیکب، شوکت پرویز، جسٹن جیکب، آگسٹن جیکب اور رزاق ہزارہ شامل تھے۔ نگران صوبائی وزیر عدنان جلیل بھی اس موقع پر موجود تھے۔ وفد نے مسیحی برادری کو درپیش بعض مسائل سے گورنر کو آگاہ کیا۔ وفد نے گورنرکوبتایا وہ گذشتہ 50 سال سے پاکستان اور صوبہ خیبرپختونخوا میں مسیحی کمیونٹی کی فلاح وبہبود کیلئے کام کررہے ہیں۔ وفد نے بتایاکہ نادرا میں انہیں شادی کی رجسٹریشن کے حوالے سے مسائل کاسامناکرنا پڑرہاہے جس کی وجہ سے انہیں کافی مشکلات درپیش ہیں۔

 

انہوں نے گورنر تجویز دی کہ مسیحی برادری کی شادی کی رجسٹریشن کیلئے پادری صاحبان یا چرچ کو نادرا کے رجسٹریشن نظام میں شامل کیا جائے تاکہ شادہ شدہ مسیحی خاندانوں کو بیرون ملک سفر کیلئے مشکلات سے بچایاجاسکے۔ انہوں نے ضلع خیبرمیں مسیحی برادری کیلئے مختص قبرستان کیلئے چاردیواری کی تعمیرکی بھی درخواست کی۔ جس پر گورنر نے فوری طور پر ریجنل منیجر نادرا اور ڈپٹی کمشنر ضلع خیبر سے رابطہ کرکے مسیحی برادری کودرپیش مسائل کاحل یقینی بنانے کی ہدایت کی۔ گورنرنے کہاکہ پاکستان میں بسنے والی اقلیتیں محب وطن ہیں، پاکستان کی تعمیر و ترقی میں ان کا اہم کردار ہے اور زندگی کے تمام شعبوں میں فعال کردار ادا کر رہی ہیں۔ انہو ں نے کہاکہ اقلیتوں کودرپیش مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کئے جائیں گے۔ وفد نے پاکستان میں اقلیتوں کو مذہبی وشخصی آزادی پر موجودہ حکومت کے اقدامات کو سراہا اورخاص طور پر مسائل کے حل میں دلچسپی لینے پر گورنر کاشکریہ ادا کیا۔

علاوہ ازیں گورنر سے نگران وزیراعلی کے مشیر جرارحسین اور معاون خصوصی ملک مہر الہی نے بھی ملاقات کی اور صوبے کے عوام کی فلاح وبہبود سمیت مختلف امور پرتبادلہ خیال کیا۔

 

Posted in تازہ ترین, جنرل خبریںTagged
72953

اقلیتی برادری سے تعلق رکھنے والے 273 مستحق افراد کو ایک کروڑ روپے کی مالی امداد کے چیک دئیے گے ۔وزیرزادہ

  اقلیتی برادری سے تعلق رکھنے والے 273 مستحق افراد کو ایک کروڑ روپے کی مالی امداد کے چیک دئیے۔وزیرزادہ

پشاور (نمائندہ چترال ٹائمز) وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے اقلیتی امور وزیر زادہ نے کہا ہے کہ حکومت اقلیتی برادری کو درپیش مسائل سے بخوبی اگاہ ہے اور اسی سلسلے میں حکومت نے اقلیتی برادری سے تعلق رکھنے والے 273 مستحق افراد کو ایک کروڑ روپے کی مالی امداد کے چیک دئیے جبکہ مزید بھی ایک کروڑ روپے کی مالی امداد کی جائے گی۔انہوں نے واضح کیا کہ موجودہ حکومت نے اقلیتی برادری کے تمام نوجوانوں کو تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنے کیلئے عملی اقدامات اٹھائے ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کے روز پشاور میں اقلیتی برادری کے غریب اور نادار افرادکو مالی امداد دینے کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر ایڈمنسٹریٹر اوقاف حامد گیانی، اسسٹنٹ ایڈمنسٹریٹر ظفر خان، سیکشن آفیسر جہانزیب خان سمیت متعلقہ حکام بھی موجود تھے۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے معاون خصوصی وزیر زادہ نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے اپنے چار سالہ دور حکومت میں وزراء اور عوام میں رابطوں کو نہ صرف آسان بنایا ہے بلکہ اقلیتی برادری کے عوام کو جو صلہ اور انہیں اپنے حقوق کے سلسلے میں شعور دیا ہے وہ اپنی مثال آپ ہے۔انہوں نے کہا کہ اقلیتی برادری کے بچوں کو تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنا ان کی اولین ترجیح ہے اور وہ اس ضمن میں اقلیتی برادری کے نوجوانوں کی تعلیم کے حصول کیلئے تمام تر اقدامات اٹھائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے اقلیتی برادری کی ترقی کا جو سفر شروع کیا ہے اس کی ماضی میں مثال نہیں ملتی کیونکہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت اور وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے اقلیتوں کیلئے ایک ارب پنتالیس کروڑ روپے کا خطیر رقم بجٹ میں مختص کیا ہے جو کہ ایک ریکارڈ ہے اس کے علاوہ اقلیتی طلباء کو پی ایم ڈی کیلئے دس لاکھ روپے، ایم فل کیلئے دو لاکھ روپے، ایم اے، ایم ایس سی کیلئے ایک لاکھ روپے، بی اے، بی ایس سی کیلئے 70000روپے اور ایف اے، ایف ایس سی کیلئے 50000روپے سکالر شپس کی مد میں دئیے جا رہے ہیں اور یہ سکالر شپس صرف 45فیصد نمبرز پر دئیے جا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہماری خواہش ہے کہ اقلیت کے نوجوانوں کو اعلیٰ سرکاری ملازمتیں ملیں۔انہوں نے کہا کہ صوبے کے 1500غریب بچوں کی سکول فیس حکومت دے رہی ہے اسی طرح مشنری اساتذہ کیلئے سالانہ کی بنیاد پر 35000روپے جبکہ میرج گرانٹ تقریباً 400لوگوں کو 80000روپے اور 1200بیواؤں کیلئے فنڈز دئیے جا رہے ہیں انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے اقلیتی برادری کے نوجوانوں کو کاروبار کیلئے گرانٹ دی جائے گی تاکہ وہ اپنی مرضی کا کاروبار کر سکیں۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے ملازمتوں میں اقلیتوں کیلئے پانچ فیصد کوٹہ مقرر کیا اور نہ صرف اس پر مکمل درآمد کیا جا رہا ہے بلکہ ملازمتوں میں اقلیتوں کیلئے ٹیسٹوں اور انٹرویوز میں بھی رعایت دی جا رہی ہے۔

chitraltimes wazir zada distributing cheques among minorities

Posted in تازہ ترین, جنرل خبریں, چترال خبریںTagged ,
61727

وزیراعلیٰ نے اقلیتی برادری کے طلباء کیلئے کوٹہ اور میرٹ سکالر شپ کی منظوری دی ہے۔وزیرزادہ

پشاور (چترال ٹائمز رپورٹ) وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے اقلیتی امور وزیر زادہ نے کہا ہے کہ تمام اقلیتی برادری وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان کے بے حد مشکور ہیں جنہوں نے اقلیتی برادری کے طلباء کو تعلیم کے میں کوٹے اور طلباء کیلئے میرٹ سکالر شپ کی منظوری دی ہے جو کہ صوبائی حکومت کا احسن اقدام ہے جس سے اقلیتی برادری کے طلباء کو اعلیٰ اور معیاری تعلیم کا حصول ممکن ہو سکے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج پشاور میں اقلیتی برادری کے ایک وفد سے ملاقات کے دوران کیا۔ معاون خصوصی نے وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت نے اقلیتی برادری کے طلباء کیلئے سکالر شپ کی منظوری دی ہے جس کے تحت اقلیتی برادری کے طلباء کو تقریباً پانچ کروڑ روپے سالانہ دے گی جو کہ ایم بی بی ایس، انجنئیرنگ کے ساٹھ طلباء کو سالانہ ایک لاکھ روپے ایم بی اے، ایم کام، ایم اے، ایم ایس سی کے 250طلباء کو سالانہ 70000سالانہ جبکہ بی اے، بی ایس سی، بی کام کے 70طلباء کو سالانہ ساٹھ ہزار روپے، اسی طرح ایف اے، ایف ایس سی کے 400طلباء کو سالانہ پچاس ہزار روپے دئیے جائیں گے۔ انہوں نے وفد کو یقین دلاتے ہوئے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف وہ واحد حکومت ہے جس نے اقلیتی برادری کے مسائل کے حل کیلئے تمام اقدامات کئے ہیں اور برادری کی فلاح و بہبود کی ترقی کے ساتھ ساتھ ان کے بچوں کی تعلیم و تربیت پر بھی توجہ مرکوز کی ہے۔انہوں نے کہا کہ اقلیتی برادری کے طلباء کیلئے ایک جامع تعلیمی سکالر شپ پروگرام ترتیب دیا گیا ہے جس سے اقلیتی طلباء کو اعلیٰ و معیاری تعلیم کا حصول ممکن ہو سکے گا۔

Posted in تازہ ترین, جنرل خبریںTagged
57370

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا نے اقلیتی برادری کے دل جیت لیئے ہیں ۔ وزیر زادہ

پشاور (چترال ٹائمز رپورٹ) وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے معاون خصوصی برائے اقلیتی امور وزیر زاد ہ نے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوامحمود خان کی جانب سے سرکاری ملازمت میں پانچ سال عمر کی رعایت کو اقلیتی برادری کے لیے کرسمس کا تحفہ قرار دیاہے اور کہاہے کہ اس فیصلے سے پاکستان تحریک انصاف کی حکومت نے تمام اقلیتوں کے دل جیت لیئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس اہم اقدام سے اقلیتی برادری کے نوجوانوں کو سرکاری ملازمت کے مواقع میسر ہوں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دفتر پشاور میں اقلیتی برادری کے مختلف وفودسے ملاقات کے دوران کیا۔

انہوں نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف وہ واحد جماعت ہے جس نے اقلیتی برادری کے مسائل کے حل کے لیے عملی اقدامات اٹھائے ہیں۔ سرکاری ملازمت کے لئے عمر میں پانچ سال رعایت ایک خوش آئند ہ فیصلہ ہے جس سے اقلیتوں کے تعلیم یافتہ نوجوان مستفید ہوں گے۔انہوں نے مزید کہا کہ اقلیتی برادری کے نوجوان جنرل،جسمانی معذوری اور کسی بھی دیگرکوٹہ کے مطابق نوکری کیلئے درخواست دے سگیں گے اور اس اقدام سے انہیں ملازمت کے حصول کے مواقع مل سکیں گے اور اقلیتی کوٹہ پر موجود خالی نشستوں پر بھی بھرتی ہو گی۔معاون خصوصی نے وفودکے پیش کردہ مسائل کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ اقلیتوں کو درپیش مشکلات کے حل کیلئے ایک جامع حکمت عملی وضح کی ہے اور اب تک کافی مسائل حل کیے گئے ہیں جبکہ اقلیتی برادری کی فلاح و بہبود و ترقی وتعلیم سمیت دیگر شعبوں میں ان کے حقوق کے تحفظ کو یقینی بنایا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اقلیتی برادری کے لیے کام کرنا ایک اعزازاور خدمت سمجھتا ہوں اور میں اپنے عوام کی یہ خدمت کرتا رہوں گا۔

Posted in تازہ ترین, جنرل خبریںTagged
56520