Chitral Times

Mar 3, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

جمعیت علمائے اسلام نے سازش کے تحت مجھے شکست دلانے کے لئے روپے پیسے کی بارش کردی جوکہ چترال کی سیاسی اور انتخابی تاریخ کا شرمناک باب ہے۔ مولانا عبد الاکبرچترالی

Posted on
شیئر کریں:

جمعیت علمائے اسلام نے سازش کے تحت مجھے شکست دلانے کے لئے روپے پیسے کی بارش کردی جوکہ چترال کی سیاسی اور انتخابی تاریخ کا شرمناک باب ہے۔ مولانا عبد الاکبرچترالی

چترال (نمائندہ  چترال ٹائمز ) جماعت اسلامی کے مرکزی رہنما، سابق ایم این اے اور عام انتخابات 2024ء میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے ون کا امیدوار مولانا عبدالاکبر چترالی نے کہا ہے کہ جمعیت علمائے اسلام نے ایک سوچا سمجھا منصوبہ اور سازش کے تحت انہیں شکست دلائی جو اپنی امیدوار کی جیت کے بجائے ان کی ووٹوں کو توڑنے میں ذیادہ سرگرمی دیکھادی اور اس مقصد کے لئے روپے پیسے کی بارش کردی جوکہ چترال کی سیاسی اور انتخابی تاریخ کا شرمناک باب ہے۔ ہفتے کے روز چترال پریس کلب میں پارٹی کے سینئر رہنماؤں مولانا اسرار الدین الہلال، مولانا رحمت اللہ اخونزادہ اور حکیم مجیب اللہ کی معیت میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ جے یوآئی کی مرکزی قیادت قومی اسمبلی کی فلور پر ان کی کارکردگی اور سچ گوئی پر ان سے نالان تھے کیونکہ انہوں نے پی ڈی ایم حکومت میں شامل جے یو آئی کے وزراء کی کرپشن اور سود کی حمایت کو دنیا کے سامنے طشت ازبام کیاتھا جوکہ پاکستان پوسٹ میں سینکڑوں اسامیوں کو فروخت کیا تھا۔

 

انہوں نے کہاکہ قومی اسمبلی کی فلور پر سود کے خلاف ووٹنگ میں جے یوآئی کے اراکین اسمبلی ان کا ساتھ دینے سے انکار کیا اور2022ء کو یوم آزادی کے موقع پر کنونشن سنٹر میں منعقدہ تقریب میں فحاشی وعریانی کی بھی مذمت کی تھی جس میں جے یو آئی سے تعلق رکھنے والے وزراء بھی موجود تھے۔ مولانا چترالی نے کہاکہ جے یو آئی ہمیشہ سے صحابہ کرام کے عظمت کے بارے میں جماعت اسلامی کے خلاف زہر افشانی کرکے اپنی سیاسی دکان چمکاتے تھے لیکن قومی اسمبلی میں جب ناموس صحابہ بل پاس کرانے میں اس نے کلیدی کردار ادا کیا تو جے یو آئی کی ٹھیکہ داری خطرے میں نظر آئی اور پارلیمنٹ تک ان کا راستہ روکنے کی کسی موقع کو نہیں گنوایا اور غیر مقامی ارب پتی شخص کو چترال لاکر ان کے مدمقابل کھڑا کرنے کا مقصدبھی یہی تھا۔

 

مولانا چترالی نے کہاکہ جے یو آئی کی مقامی قیادت اب کسی کو منہ دیکھانے کے قابل نہیں کیونکہ ووٹ کے لئے کھلے عام رشوت دے کر اور چند ٹکوں کی خاطر خواتین کو سڑکوں پر لے آنا نہایت قبیح فعل تھا جوکہ ہماری تہذیب وتمدن کے بھی خلاف بات ہے جہاں عوام کو بھکاری بنادیا گیا۔ انہوں نے الیکشن جیتنے والے امیدواروں کو مبارک باد دی اور ان کی کامیابی کے لئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

chitraltimes abdul akbar chitrali press confrence


شیئر کریں: