Chitral Times

Apr 16, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

الیکشن کمیشن نے شہباز، عمران، فضل الرحمٰن اور زرداری کو مدعو کر لیا

Posted on
شیئر کریں:

الیکشن کمیشن نے شہباز، عمران، فضل الرحمٰن اور زرداری کو مدعو کر لیا

اسلام آباد(چترال ٹایمزرپورٹ)الیکشن کمیشن نے شہباز شریف، چیئرمین پی ٹی آئی، مولانا فضل الرحمٰن اور آصف علی زرداری کو مدعو کر لیا۔الیکشن کمیشن نے چیئرمین پی ٹی آئی کو خط لکھ کر 24 اگست کو دن 2 بجے مدعو کر لیا۔ذرائع کے مطابق الیکشن کمیشن نے مولانا فضل الرحمٰن کو 24 اگست شام 3 بجے مدعو کر لیا۔الیکشن کمیشن نے 25 اگست دن 11 بجے مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کو مدعو کر لیا۔پاکستان پیپلز پارٹی کو 29 اگست شام 3 بجے مدعو کیا گیا، آصف علی زرداری کو مراسلہ بھیج دیا گیا۔ذرائع کا بتانا ہے کہ ملاقات کے ایجنڈے میں حلقہ بندیاں اور انتخابی فہرستوں سے متعلق بات چیت شامل ہے۔اجلاس میں عام انتخابات کے انعقاد اور الیکشن شیڈول پر بات کی جائے گی۔پارٹی سربراہان اپنے نمائندوں کے نام الیکشن کمیشن کو ارسال کر دیں۔

رضوانہ تشدد کیس؛ سول جج کو نوکری سے فارغ کرنے کی درخواست سماعت کیلیے منظور

اسلام آباد(سی ایم لنکس)رضوانہ تشدد کیس میں سول جج کو نوکری سے فارغ کرنے کی درخواست سماعت کے لیے منظور کرلی گئی۔ہائی کورٹ نے کم سن گھریلو ملازمہ رضوانہ پر تشدد کے کیس میں ملزمہ سومیہ عاصم کے شوہر سول جج عاصم حفیظ کو نوکری سے برخاست کرنے کے لیے دائر درخواست سماعت کے لیے منظور کرلی۔ عدالت نے وفاقی حکومت اور ایڈووکیٹ جنرل آفس کو نوٹس جاری کرتے ہوئے معاونت طلب کرلی۔اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس عامر فاروق نے سول سوسائٹی کی درخواست پر سماعت کی اور ڈپٹی اٹارنی جنرل احسن رضا اور اسٹیٹ کونسل کو روسٹرم پر طلب کر لیا۔ چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ سول جج کا معاملہ ویسے تو ایڈمنسٹریٹو سائیڈ پر ہے لیکن ہم جوڈیشل سائیڈ پر بھی دیکھیں گے۔ ہمارے پاس اس حوالے سے تفصیلی درخواست آئی ہے۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ بچوں پر تشدد اور چائلڈ لیبر سے متعلق فیڈریشن کو دیکھنا چاہیے۔ دوران سماعت چیف جسٹس نے طیبہ تشدد کیس کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس سے قبل کم سن طیبہ تشدد کیس سمیت متعدد واقعات سامنے آئے ہیں۔ ہم اس درخواست پر وفاق اور ایڈوکیٹ جنرل آفس کو نوٹس کر رہے ہیں، جس پر اسٹیٹ کونسل نے کہا کہ ہمیں درخواست کی کاپی فراہم کی جائے تاکہ ہم نوٹس کی تیاری کرلیں۔واضح رہے کہ یہ درخواست سول سوسائٹی نیٹ ورک اسلام آباد کے صدرعبد اللہ ملک کی جانب سے دائر کی گئی ہے جب کہ سول جج عاصم حفیظ کی اہلیہ کم سن رضوانہ پر تشدد کرنے کے الزام میں جوڈیشل ریمانڈ پر ہیں اور سول جج عاصم حفیظ کو لاہور ہائی کورٹ نے او ایس ڈی بنا رکھا ہے۔عدالت نے کیس کی آئندہ سماعت غیر معینہ مدت تک ملتوی کردی۔


شیئر کریں:
Posted in تازہ ترین, جنرل خبریںTagged
78209