Chitral Times

Sep 27, 2023

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

وائس چانسلرز کی تعیناتی میں میرٹ اورشفافیت پرکوئی سمجھوتہ نہیں ہوچاہئیے، گورنرحاجی غلام علی

Posted on
شیئر کریں:

وائس چانسلرز کی تعیناتی میں میرٹ اورشفافیت پرکوئی سمجھوتہ نہیں ہوچاہئیے، گورنرحاجی غلام علی

گورنرکی زیرصدارت یونیورسٹیوں میں وائس چانسلرز کی تعیناتی اور سرچ کمیٹی سمیت یونیورسٹیوں کے مشکلات کے حوالے سے اعلی سطحی اجلاس

اجلاس میں نگران صوبائی وزراء بیرسٹرفیروزجما ل شاہ کاکاخیل، جسٹس(ر)ارشاد قیصر، حامدشاہ، چیف سیکرٹری ندیم اسلم چوہدری اوردیگراعلی حکام کی شرکت

پشاور ( چترال ٹایمز رپورٹ ) گورنرخیبرپختونخوا حاجی غلام علی نے کہاہے کہ پبلک سیکٹرزیونیورسٹیوں میں وائس چانسلرزکی تعیناتیوں میں  میرٹ اورشفافیت پر کوئی سمجھوتہ نہیں ہوناچاہئیے۔ یونیورسٹیوں میں وائس چانسلرز کی حیثیت ایک ٹیم لیڈر کی ہوتی ہے جس میں تعلیمی وانتظامی قابلیت سمیت تمام پہلووں کو باریک بینی سے دیکھناچاہئیے۔
یہ بات انہوں نے صوبہ کی اعلیٰ تعلیمی جامعات میں مستقل بنیادوں پر وائس چانسلرزکی تعیناتیوں اورسرچ کمیٹی سمیت یونیورسٹیوں کے مشکلات سے متعلق گذشتہ روز گورنرہاؤس میں منعقدہ اعلیٰ سطح اجلاس کی صدارت کے دوران کی۔ اجلاس میں نگران صوبائی وزراء بیرسٹرفیروزجما ل شاہ کاکاخیل، جسٹس(ر)ارشاد قیصر، حامدشاہ، چیف سیکرٹری خیبرپختونخوا ندیم اسلم چوہدری، سیکرٹری محکمہ قانون، سیکرٹری محکمہ اعلی تعلیم، پرنسپل سیکرٹری برائے گورنر ارشادمظہر اوردیگر متعلقہ حکام نے شرکت کی۔ اجلاس میں عرصہ دراز سے صوبہ کی مختلف یونیورسٹیوں میں مستقل بنیادوں پر وائس چانسلرزکی بروقت تعیناتیاں نہ ہونے سے یونیورسٹیوں کو درپیش مالی وانتظامی اورتعلیمی مسائل ومشکلات پر گفتکو کی گئی۔اجلاس میں صوبے میں نئے بننے والی یونیورسٹیوں شرینگل، تیمرگرہ سمیت دیگر پبلک سیکٹریونیورسٹیوں میں وائس چانسلرز کی تعیناتی اور سرچ کمیٹی کے بارے میں تفصیلی غورکیاگیااور بعض شکایات بھی زیربحث لائے گئے۔ چیف سیکرٹری نے یونیورسٹیوں کے معاملات اور وی سی کی تعیناتی کے حوالے سے اجلاس کو آگاہ کیا۔ اس کے علاوہ اجلاس میں قائمقام سیکرٹری قانون اورسیکرٹری محکمہ اعلی تعلیم نے بھی یونیورسٹیوں میں وائس چانسلرز کی تعیناتی کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دی۔

 

اجلاس میں فیصلہ کیاگیاکہ وائس چانسلرز کی تعیناتی فوری طور پر کی جائے اورنگران وزیربرائے اعلیٰ تعلیم وقانون اورچیف سیکرٹری سے کہاگیاکہ چیئرمین سرچ کمیٹی سے بات کی جائے کہ کسی بھی صورت میرٹ کی خلاف ورزی نہ ہو اورنہ ہی کسی امیدوار کے ساتھ زیاتی ہونی چاہئے۔
اس موقع پر گورنرنے کہاکہ وائس چانسلرز کی تعیناتی میں کسی بھی طور میرٹ اورشفافیت کے برعکس کوئی فیصلہ نہ ہو اورچیف سیکرٹری،قائمقام سیکرٹری قانون سمیت دیگرحکام کوہدایت کی کہ موصول ہونیوالے شکایات کو سرچ کمیٹی کے نوٹس میں لایاجائے اور ایسا کوئی اقدام نہ اٹھایاجائے جس سے میرٹ متاثرہو۔ انہوں نے کہاکہ یونیورسٹیوں کو تمام سہولیات مہیاکرنے سمیت تنخواہوں میں اضافے کو بھی مدنظر رکھناچاہئیے تاکہ ان کے مالی مشکلات کا خاتمہ ہو اوروہ اپنی تمام ترتوجہ طلباء وطالبات کی بہترتعلیم وتربیت پرمرکوز رکھ سکیں۔

 

تمام وائس چانسلرز، معززفیکلٹی اراکین اوردیگرسٹاف سمیت ہم سب ملکر یونیورسٹیوں کے معیار اورمقام کو بلند کرنے میں اپنا کردار ادا کریں۔ہر گزرتے وقت کے ساتھ تعلیمی شعبہ میں تبدیلیاں آرہی ہیں،تحقیق کے شعبہ میں ہمیں دور جدید کے چیلنجز کے مطابق آگے بڑھنا ہوگا اور اس کے لئے تمام یونیورسٹیوں میں مطلوبہ سہولیات کی فراہمی کو یقینی بناناہوگا۔انہوں نے کہاکہ طلباء وطالبات یونیورسٹیوں سے دورجدید سے ہم آہنگ اعلی اورمعیاری تعلیم میں انمول ہیرے بن کرفارغ ہو، تاکہ نہ صرف عملی میدان میں اپنے ملک وقوم کی صحیح طور پر خدمت کرسکیں بلکہ ملک کی تعمیروترقی میں اپنا حصہ ڈالیں اور اقوام عالم میں بھی اپنے ملک وقوم کا نام روشن کرسکیں۔انہوں نے کہاکہ ملکی ترقی و خوشحالی کا بوجھ اب تعلیم یافتہ نوجوانوں نے اٹھانا ہے،موجودہ دور ٹیکنالوجی کا دور ہے اور جدید ٹیکنالوجی سے لیس نوجوانوں نے ملک کو مشکلات سے نکالنا ہے۔

گورنر حاجی غلام علی کا سابق صوبائی وزیر و پیپلزپارٹی کے رہنما لیاقت شباب کے انتقال پر اظہار افسوس


پشاور ( چترال ٹایمز رپورٹ ) گورنرخیبرپختونخوا حاجی غلام علی نے سابق صوبائی وزیر و پاکستان پیپلزپارٹی پشاور ڈویژن کے صدرلیاقت شباب کے انتقال پر دلی افسوس کااظہارکیاہے۔اپنے تعزیتی بیان میں گورنرنے سوگوار خاندان سے تعزیت کااظہارکرتے ہوئے  مرحوم کی مغفرت کی دعا کی ہے۔ انہوں نے کہاکہ وہ مرحو م کے اہل خانہ کے غم میں برابرکے شریک ہیں، اللہ تعالی مرحوم کو جنت الفردوس میں اعلی مقام عطاء فرمائیں۔ گورنرنے لیاقت شباب کے انتقال پرپاکستان پیپلزپارٹی کی قیادت اور رہنماؤں سے بھی تعزیت کا اظہارکیا ہے۔ #


شیئر کریں: