Chitral Times

Mar 3, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

معاشی ترقی کے حصہ دار گڈز ٹرانسپورٹرز کی گاڑیوں کو نذر آتش کرنے والے ملک و قوم کے وفادار نہیں تھے، گورنر

Posted on
شیئر کریں:

معاشی ترقی کے حصہ دار گڈز ٹرانسپورٹرز کی گاڑیوں کو نذر آتش کرنے والے ملک و قوم کے وفادار نہیں تھے، گورنر
گورنر اور نگران وزیراعلیٰ سے آل خیبر پختونخوا گڈزٹرانسپورٹ یونین کے نمائندہ وفد کی گورنرہاؤس میں ملاقات، 9 مئی یوم سیاہ کے پرتشددانہ واقعات میں خیبرپختونخوا کی مال بردار گاڑیوں کوسندھ اور پنجاب میں نذرآتش کئے جانے سے متعلق آگاہ کیا
گورنرسے سینیٹرروبینہ خالد اورسابق رکن صوبائی اسمبلی شازیہ طہماش اور چمکنی کے نمائندہ وفد کی بھی الگ الگ ملاقاتیں، مختلف امورپرتبادلہ خیال

پشاور ( چترال ٹایمزرپورٹ )  وزیراعظم محمدشہباز شریف کی ہدایت پر گورنرخیبرپختونخوا حاجی غلام علی اور نگران وزیراعلیٰ محمداعظم خان نے بدھ کے روز آل خیبر پختونخوا گڈزٹرانسپورٹ یونین کے نمائندہ وفدسے گورنرہاؤس میں مشترکہ ملاقات کی اور گورنر، وزیراعلیٰ کو 9 مئی یوم سیاہ کے پرتشدد واقعات میں خیبرپختونخوا کی مال بردار گاڑیوں کو جلانے و نقصانات سے متعلق آگاہ کیا، آل خیبرپختونخوا گڈز ٹرانسپورٹ کے چیئرمین حاجی لیاقت خان ہوتی کی سربراہی میں گورنر و نگران وزیراعلیٰ سے مشترکہ ملاقات کرنیوالے وفد میں جنرل سیکرٹری حاجی سکندر خان سمیت مردان، سوات، صوابی، پشاور،گدون او درگئی سے یونین کے عہدیدار پیر تاج، حاجی مہتاب خان،شمس، ایوب اورنیاز خان سمیت دیگر شامل تھے۔

 

وفد نے گورنراور وزیراعلی کو بتایا کہ 9 مئی کو صوبہ سندھ کے علاقوں کراچی، سکھر، صادق آباد، اور صوبہ پنجاب کے علاقوں رحیم یارخان، لاہور، کامونکی، راولپنڈی اور وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں خیبرپختونخوا سے تعلق رکھنے والے گڈزٹرانسپورٹرز کی مال بردار گاڑیوں، کنٹینرز کو پرتشدد مظاہرین نے نذر آتش کیا جس سے ٹرانسپورٹرز کا کافی مالی نقصان ہوا ہے۔ وفد نے بتایا کہ اس حوالے سے وزیراعظم پاکستان کو تحریری طور پر آگاہ کیا گیا ہے اور اب گورنر، نگران وزیر اعلیٰ سے درخواست کرتے ہیں کہ خیبرپختونخوا کے ٹرانسپورٹرز کو ہونیوالے نقصانات کا ازالہ کیا جائے۔وفدنے انڈس ہائی وے پر قائم کوہاٹ کانٹا میں مال بردار گاڑیوں کووزن پرناجائزجرمانہ کرنے سے متعلق شکایت بھی کی جس پر نگران وزیراعلیٰ نے کہاکہ اس حوالے سے تحریری شکایت ارسال کریں تاکہ ضروری کارروائی کی جاسکے۔اس موقع پر گورنر اور نگران وزیراعلیٰ نے مشترکہ طور پر وفد کو مال بردار گاڑیوں کو جلانے و نقصانات کے حقیقی اعداد وشمار بھی فراہم کرنے اور سندھ و پنجاب کی حکومتوں کو بھی نقصانات سے متعلق تحریری طور پر آگاہ کرنیکی ہدایت کی۔ گورنر نے کہا کہ 9 مئی کے پرتشدد واقعات کی پوری قوم نے نہ صرف مذمت کی ہے بلکہ پر تشدد واقعات میں ملوث افراد سے مکمل علیحدگی کا اعلان کیا ہے، ٹرانسپورٹرز کا پہیہ چلتا ہے تو ملکی معیشت چلتی ہے، قومی املاک اور معیشت کی ترقی کے حصہ دار گڈز ٹرانسپورٹرز کی گاڑیوں کو نذر آتش کرنے والے ملک و قوم کے وفادار نہیں تھے۔

 

انہوں نے کہا کہ اصولی طور پر پرتشدد واقعات میں ملوث افراد سے تمام نقصانات کی ریکوری ہونی چاہئے اور ان سے ایک ایک روپیہ وصول کرنے کے ساتھ قرار واقعی سزا بھی ملنی چاہئے تاکہ آئندہ کوئی ایسی جرآت نہ کر سکے۔ انہوں نے کہا کہ ملک بھر کی گڈزٹرانسپورٹ میں 75 فیصد خیبرپختونخوا کی گاڑیاں شامل ہیں اور اندرون و بیرون ملک سامان کی ترسیل و تجارتی سرگرمیاں کرنیوالے ٹرانسپورٹرز کے ساتھ مکمل تعاون کیا جائے گا۔وفد نے اس موقع پر گورنر اور نگران وزیراعلٰی کا مشترکہ طور پر ملاقات کا وقت دینے اور مشترکہ تعاون کی یقین دہانی پر شکریہ ادا کیا۔ علاوہ ازیں پاکستان پیپلزپارٹی کی سینیٹر روبینہ خالد اورسابق رکن صوبائی اسمبلی شازیہ طہماش نے بھی گورنرہاؤس میں گورنر سے ملاقات کی اور صوبے کے عوام کی فلاح وبہبود سے متعلق مختلف امور پرتبادلہ خیال کیا۔دریں اثناء چمکنی پشاور سے مظہرعالم کی سربراہی میں 18 رکنی نمائندہ وفدنے بھی گورنرسے ملاقات کی۔وفد میں عباداللہ، فخرعالم اورعبدالوہاب سمیت دیگر شامل تھے۔وفد نے  علاقے کے عوام کودرپیش مسائل سے گورنر کو آگاہ کیاجس پر گورنرنے وفدکو مسائل کے حل کیلئے اپنی جانب سے مکمل تعاون کا یقین دلایا۔


شیئر کریں: