Chitral Times

Jun 12, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

روس سے آئے جہاز سے خام تیل نکالنے کا کام شروع، ٹیسٹنگ کا عمل24 گھنٹوں میں مکمل ہوجائے گا۔ذرائع وزارت پٹرولیم

Posted on
شیئر کریں:

روس سے آئے جہاز سے خام تیل نکالنے کا کام شروع، ٹیسٹنگ کا عمل24 گھنٹوں میں مکمل ہوجائے گا۔ذرائع وزارت پٹرولیم

کراچی( چترال ٹایمز رپورٹ )روس سے آئے جہاز پیور پوائنٹ سے خام تیل نکالنے کا کام شروع کر دیا گیا۔پاکستان ریفائنری ذرائع کے مطابق جہاز سے 3 ہزار ٹن تیل پاکستان ریفائنری منتقل کیا جائے گا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ پیور پوائنٹ سے روسی خام تیل منتقلی کل مکمل ہو جائے گی۔واضح رہے کہ گزشتہ روز پہلا روسی خام تیل بردار جہاز کراچی بندرگاہ پہنچا تھا۔اس حوالے سے وزیرِ اعظم شہباز شریف نے کہا تھا کہ قوم سے کیا ہوا ایک اور وعدہ پورا کر دیا۔انہوں نے کہا تھا کہ خوشی کے ساتھ اعلان کر رہا ہوں کہ روس سے رعایتی قیمت پر خام تیل سے بھرا بحری جہاز کراچی پہنچ گیا ہے اور کل سے تیل کی ترسیل شروع ہو جائے گی۔

 

روس سے درآمد کئے جانے والے خام تیل کی ٹیسٹنگ کا عمل24 گھنٹوں میں مکمل ہوجائے گاذرائع وزارت پٹرولیم

اسلام آباد(سی ایم لنکس)روس سے درآمد کئے جانے والے خام تیل کی ٹیسٹنگ کا عمل24 گھنٹوں میں مکمل ہوجائے گا،روسی خام تیل سے پاکستان کو توانائی کی ضرورت پوری کرنے اور زرمبادلہ کے ذخائر کو مستحکم بنانے میں مددملے گی۔ وزارت پٹرولیم کے ذرائع کے مطابق روس سے خام تیل موخر ادائیگی کی سہولت پر عالمی مارکیٹ سے کم قیمت پر خریداجا رہا ہے۔ملک کی بڑی ریفائنریز پاکستان ریفائنری لمیٹڈ، نیشنل ریفائنری لمیٹڈ اور پاک عرب ریفائنری لمیٹڈ نے درآمد ی خام تیل کو ریفائن کرنے میں دلچسپی ظاہر کی ہے۔ خام تیل کی ریفائنگ کی رپورٹ وزارت پٹرولیم کو فراہم کی جا ئے گی جس میں خام تیل کے معیار،ترسیل کی لاگت، کمرشل طور پر اس کے قابل استعمال ہونے، پٹرول، ڈیزل، مٹی کے تیل، فرنس آئل، تارکول اور جے پی ایٹ کی مقدار معلوم کی جائے گی۔رپورٹ کی منظوری کے بعد حکومت سیحکومت تک کی سطح پر خام تیل کی درآمد کے لئے معاہدے کا امکان ہے۔ ایک لاکھ ٹن روسی خام تیل لے کر آزمائشی طور پر پہلا بحری جہاز 7 جون کو اومان کی بندر گاہ داقم پہنچا تھا جہاں سے 45ہزار ٹن سے زائد خام تیل ایک چھوٹے بحری جہاز کے ذریعے کراچی پہنچایا گیا ہے۔یہی بحری جہاز بقایا خام تیل اومان کی بندرگاہ سے 20 جون تک کراچی پورٹ پہنچائے گا۔ پاکستان اپنی ضرورت کا 70 فیصد خام تیل درآمد کرتا ہے جو پاکستان ریفائنری لمیٹڈ، نیشنل ریفائنری لمیٹڈ، پاک عرب ریفائنری لمیٹڈ اور بائیکو پٹرولیم ریفائن کرتی ہیں۔باقی 30 فیصد تیل کی ضروریات ملکی پیداوار سے پوری کی جاتی ہیں۔

 


شیئر کریں:
Posted in تازہ ترین, جنرل خبریںTagged
75588