Chitral Times

Dec 2, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

ضمنی انتخابات کے نتائج عمران خان کے بیانیے کی فتح ہیں اور اب یہ تبدیلی نہیں بلکہ ایک انقلاب ہے جس کے سامنے اب کوئی نہیں ٹھہر سکتا۔وزیراعلیِ

Posted on
شیئر کریں:

ضمنی انتخابات کے نتائج عمران خان کے بیانیے کی فتح ہیں اور اب یہ تبدیلی نہیں بلکہ ایک انقلاب ہے جس کے سامنے اب کوئی نہیں ٹھہر سکتا۔وزیراعلیِ

پشاور ( چترال ٹایمز رپورٹ ) وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے خیبر پختونخوا اور دیگر صوبوں میں قومی اسمبلی اور پنجاب اسمبلی کی نشستوں کے لیے منعقدہ ضمنی انتخابات میں پاکستان تحریک انصاف کی شاندار کامیابی پر پارٹی قائد عمران خان، پارٹی کی سینئر لیڈر شپ ، پارٹی امیدواروں اور کارکنان کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ ضمنی انتخابات کے نتائج عمران خان کے بیانیے کی فتح ہیں اور اب یہ تبدیلی نہیں بلکہ ایک انقلاب ہے جس کے سامنے اب کوئی نہیں ٹھہر سکتا۔یہ انتخابات چور ٹولے کے خلاف ایک ریفرنڈم ہےں اور یہ ثابت ہوگیا ہے کہ 13 جماعتوں کے گٹھ جوڑ کو عوام نے یکسر مسترد کردیا ہے اور اب ان کے پاس اقتدار پر مسلط رہنے کا کوئی جواز باقی نہیں رہا۔

 

عوام نے اپنا فیصلہ سنا دیا ہے کہ کونسی سیاسی جماعت اور کونسا لیڈر اس غیور قوم کی قیادت کر سکتا ہے۔ وزیراعلیٰ سیکرٹریٹ سے جاری اپنے ایک بیان میں وزیراعلیٰ محمود خان نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی ایک ناقابل تسخیر جماعت بن چکی ہے اور یہ واحد جماعت ہے جو وفا ق کی علامت ہے۔ پی ڈی ایم میں شامل تمام سیاسی جماعتوں میں پی ٹی آئی کا مقابلہ کرنے کی صلاحیت نہیں ہے، یہ جماعتیں گلی کوچوں کی سیاست کریں، تحریک انصاف کا مقابلہ کرنا ان کے بس کی بات نہیں ہے۔ خیبرپختونخوا کی طرح پورے ملک کے عوام عمران خان کے ساتھ ڈٹ کر کھڑے ہیں اور ضمنی انتخابات کے نتائج واضح بتا رہے ہیں کہ آئندہ عام انتخابات میں پاکستان تحریک انصاف پورے ملک میں کلین سویپ کرے گی اور دو تہائی اکثریت سے حکومت بنائے گی۔

 

وزیر اعلیٰ محمود خان نے پی ٹی آئی پر بھر پور اعتماد کا اظہار کرنے پر پورے پاکستان باالخصوص خیبرپختونخوا کے باشعور عوام کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ان انتخابات نے پی ڈی ایم کی تمام جماعتوں کی سیاست ہمیشہ کے لیے دفن کردی ہے اور یہ واضح ہوگیا ہے کہ پی ٹی آئی اور عمران خان ہی عوامی امنگوں کے ترجمان ہے۔ وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ عوام نے پوری قوم کی تقدیر کا فیصلہ سنا دیا ہے اور امپورٹڈ حکمرانوں کو ٹھکرا دیا ہے۔ یہ ضمنی انتخابات آنے والے عام انتخابات کا ٹریلر ہیں، آنے والے عام انتخابات میں پی ٹی آئی دو تہائی اکثریت کے ساتھ دوبارہ اقتدار میں آئے گی۔پی ڈی ایم ایک سازش کے تحت اقتدار میں آئی اور ان انتخابات کے نتائج کے بعد پی ڈی ایم میں شامل تمام جماعتوں کو قوم سے معافی مانگنی چاہیے اور حکومت سے مستعفی ہونا چاہئیے کیونکہ یہ اخلاقی جواز کھو بیٹھی ہیں۔


شیئر کریں: