Chitral Times

Feb 28, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

خیبر پختونخوا میں ایک ہی تعلیمی بورڈ کے تحت میٹرک اور انٹرمیڈیٹ امتحانات کے انعقاد کرانے کے حوالے سے اجلاس

Posted on
شیئر کریں:

خیبر پختونخوا میں ایک ہی تعلیمی بورڈ کے تحت میٹرک اور انٹرمیڈیٹ امتحانات کے انعقاد کرانے کے حوالے سے اجلاس

پشاور (نمایندہ چترال ٹایمز) حکومت خیبر پختونخوا کی ہدایات کی روشنی میں صوبہ میں موجود آٹھ مختلف تعلیمی بورڈز کے تحت منعقد ہونے والے میٹرک اور انٹر میڈیٹ کے امتحانات کو ایک ہی تعلیمی بورڈ کے ذریعے منعقد کروانے کے حوالے سے محکمہ ابتدائی و ثانوی تعلیم میں سیکرٹری تعلیم کی زیر صدارت ایک اجلاس منعقد ہوا۔ حکومت خیبر پختونخوا کے تعلیمی اصلاحاتی ایجنڈے کے مطابق امتحانی بورڈز کے نظام میں جدت لائی جا رہی ہے اور اس سرگرمی کا اولین مقصد صوبہ بھر کے تعلیمی نظام میں مزید شفافیت اور یکسانیت لانا ہے۔تین گھنٹے طویل اجلاس میں ایک ہی بورڈ کے تحت امتحانات منعقد کروانے کے حوالے سے مختلف پہلوؤں پر غور کیا گیا۔ اجلاس میں عادل صافی اسپیشل سیکرٹری چیف منسٹر سیکرٹریٹ، قیصر عالم چیئرمین فیڈرل بورڈ، نصراللہ خان چیئرمین پشاور بورڈ، ثمینہ الطاف چیئر پرسن کوہاٹ بورڈ، ایڈیشنل ڈائریکٹر محمد اقبال، عالمگیر خان پرنسپل گورنمنٹ ہائر سیکنڈری سکول مردان، سابقہ ایڈیشنل ڈائریکٹر ذوالفقار اور لال سعید خٹک ڈپٹی سیکرٹری بورڈ و ٹریننگ نے بھی شرکت کی۔ اجلاس کو بتایا گیا کہ امتحانی بورڈز کے نظام میں جو بہتری لائی جا رہی ہے اس کے تحت کسی بھی بورڈ کے ملازم کی نہ تو پروموشن میں فرق پڑے گا، نہ ہی سیلری میں اور نہ ہی ان کے انتظامی امور کے حوالے سے کوئی مسائل در پیش آئیں گے جبکہ ان کے حقوق کا مکمل تحفظ کیا جائے گا۔ اس حوالے سے مختلف پہلوؤں کا جائزہ لینے کے لئے تین سب کمیٹیز بھی تشکیل دے دی گئیں۔ دنیا بھر میں امتحانی تعلیمی نظام جدت اختیار کر رہا ہے اور یہ صوبہ خیبر پختونخواکے ہر بچے کا حق ہے کہ اس کو ایک جیسا امتحانی پیپر میسر ہو۔ صوبے بھر میں انجینئرنگ یونیورسٹیز،میڈیکل کالجز اور مقابلے کے امتحانات میں بھی تمام بچوں کو یکساں پیپر حل کرنے کو ملتا ہے تو یہی نظام ہم اپنے صوبہ کے سیکنڈری اور ہائیر سیکنڈری سکولوں کے امتحانات میں لے کر آئیں گے۔ امتحانات کے انعقاد کے حوالے سے اجلاس کو فیڈرل تعلیمی بورڈ کے امتحانی طریقہ کار اور جدید ٹیکنالوجی کے استعمال پر بھی بریفنگ دی گئی۔علاوہ ازیں، صوبہ بھر کی سول سوسائٹی، سیاسی و سماجی حلقے اور والدین، حکومت خیبر پختونخوا کو اس کاوش پر بہترین انداز میں خراج تحسین پیش کر رہے ہیں۔


شیئر کریں: