Chitral Times

Sep 28, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

چترال کے مختلف علاقوں میں مائننگ پر کام کرنے والے چینی کمپنیوں کے اہلکاروں کو ضلع چھوڑنے کا حکم

Posted on
شیئر کریں:

چترال کے مختلف علاقوں میں مائننگ پر کام کرنے والے چینی کمپنیوں کے اہلکاروں کو ضلع چھوڑنے کا حکم

چترال (نمائندہ چترال ٹایمز) چترال کے مختلف علاقوں میں مائننگ پر کام کرنے والے چینی کمپنیوں کو سیکورٹی کے حوالے سے دی گئی ہدایات پر عمل نہ کرنے کی پاداش میں ضلع کو چھوڑنے کا حکم دے دیا گیا اور یہ ایس اوپیز ان کی تحفظ کے لئے بنائی گئی ہیں۔ ڈسٹرکٹ پولیس افیسر لویر چترال سونیہ شمروز خان نے میڈیا کو بتایاکہ لوٹ کوہ ویلی میں شوغور کے مقام پر مائننگ میں مصروف تین چینی کمپنیوں میں سے دو سیکورٹی کے لئے دی گئی ہدایات پر عمل کرنے میں ناکام پائے گئے جبکہ دروش کے قریب گنگ کے مقام پر ماربل کی کوویرنگ کرنے والی چینی کمپنی بھی ہدایات پر عمل کرنے میں ناکام پائی گئی جبکہ دروش ہی کے قریب لاوی ہائیڈل پاؤر پراجیکٹ کے چینی تعمیراتی فارم بھی ان ایس او پیز پر پورا پورا عمل کرنے میں ناکام رہا۔ ڈی پی او نے کہاکہ ان سائٹوں پر کام کرنے والی کمپنیوں اور تعمیراتی فارم کی حفاظت کے لئے متعین ایس او پیز کے حوالے سے سائٹوں کی سیکورٹی اڈٹ وقتاً فوقتاً کرواکر انہیں خامیوں اور کمزوریوں کی نشاندہی کرائی جاتی ہے اور بار بار غفلت کا مظاہرہ کرنے والے کمپنیوں کی سائٹ کو بند کردیا جاتا ہے اور نشاندہی کردہ خامیوں کو دور کرنے پر دوبارہ اجازت دی جاتی ہے۔


شیئر کریں: