Chitral Times

Sep 28, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

میئر لوئیر چترال کوہ اور اپر چترال کے درمیان فاصلہ پیدا کرکے صارفین بجلی کو مستقل مسائل سے دوچار کر رہی ہے۔عمائدین اپر چترال

Posted on
شیئر کریں:

میئر لوئیر چترال کوہ اور اپر چترال کے درمیان فاصلہ پیدا کرکے صارفین بجلی کو مستقل مسائل سے دوچار کر رہی ہے۔عمائدین اپر چترال

اپر چترال ( زاکرمحمد زخمی ) مئیر لوئیر چترال شہزادہ امان الرحمٰن کی اس بیان پر( کہ بیرموغ گولین کے دو میگاوٹ بجلی کو فراہم کرکے کوہ لوڈ شیڈنگ کا مسلہ حل کر لیا جائیگا) کی شدید مزمت کرتے ہوئے مسترد کردی۔ عمائدین اپر چترال جن میں نو منتخب چیرمین،کونسلرز،سابق ناظمین اور دوسرے افراد شامل تھے ایک ہنگامی پریس ریلیز کے ذریعے جملہ زمہ دراں کو متنبہ کی کہ کوہ کے عوام کو بجلی لوڈشیڈنگ کی غذاب سے نکالنا احسن اقدام ہے تاہم اس کے آڑ میں پیڈو کا ٹرانسمیشن لائن کا اگر استعمال کرنے کا تجویز ہے تو یہ کسی بھی طرح اپر چترال کو منظور نہیں۔ تحصیل مئیر کو چاہیے اتنے اہم اقدام اٹھاتے ہوئےزمینی حقائق کو مدنظر رکھنا چاہیے۔اگر مئیر صاحب میں اتنی صلاحیت ہے توایس ار ایس پی 2میگاواٹ بیرموغ پاور ہاؤس کے لیے علیحدہ ٹرانسمیشن لائن بیچھا دے اور کوہ کے عوام کو مصیبت سے نجات دلا دیں۔بصورت دیگر کوئی بھی عمل اپر چترال صارفین کے لیے ناقابل برداشت ہوگی۔

 

عمائدین کا کہنا تھا میئر کی اس غیرمساوینہ سوچ اپر چترال اور کوہ کے عوام کے مابین فاصلہ پیدا کرکے بجلی کی تحریک کو سبوتاژ کرنے کی سازش ہے جسے کامیاب ہونے نہیں دیا جائیگا۔ان کا کہنا تھا کہ اگر اتنی بےجااختیارات مئیر لوئیرچترال کو حاصل ہیں کہ ایک ضلع کی ٹرانسمیشن لائن کو کاٹ کر صارفین کو متاثر کرسکتاہے تو اپر چترال میں بھی دو تحصیل چیرمین ہیں۔ انہیں بھی اگے انا چاہیے۔اور اپنے علاقے کے عوام کی بھر پور نمائندگی کرنا چاہیے بصورت دیگر عوام اپنا فیصلہ کرنے میں ازاد ہوگی ۔عمائدین کا کہنا تھا کہ گزاشتہ روز ہم اپنا احتجاج اور روڈ بلاک جشن شندور کے پیش نظر عوام اور انتظامیہ کے مشکلات کو مدنظر رکھتے ہوئے ختم کردی تھی ایسا نہ ہو کہ عوام ایک بار پھر سڑکوں پر ائیے۔اس نازک صورت حال کا ادراک زمہ داروں کے لیے ضروری ہے۔صارفین بجلی جو پہلے سے اپر چترال میں مصیبت سے دوچار ہیں انہیں مزید ازمائش میں نہ ڈالا جائے۔

chitraltimes upper chitral protest for electricity

chitraltimes upper chitral protest for loadsheeding 4


شیئر کریں: