Chitral Times

Feb 7, 2023

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

ملیشیئن بائیکرزریلی کادنیا کی بلند ترین پولوگراؤنڈ شندور میں پڑاؤ،ایڈونچر سفر سے لطف اندوز

Posted on
شیئر کریں:

ملیشیئن بائیکرزریلی کادنیا کی بلند ترین پولوگراؤنڈ شندور میں پڑاؤ،ایڈونچر سفر سے لطف اندوز

خیبرپختونخواکلچراینڈٹورازم اتھارٹی، سیاح ٹریولز اور ایپو بائیکرز کلب ملیشیاء کے زیراہتمام بائیکرز ریلی شندور ٹاپ پہنچ گئی، بائیکرز شندور کی خوبصورتی کے دیوانے ہوگئے۔

مستوج (نمائندہ چترال ٹایمز)خیبرپختونخوا کے سیاحتی مقامات کی سیر و تفریح پر آئے ملیشیاء کے 22 بائیکرز مستوج سے ہوتے ہوئے دنیا کے بلند ترین پولو گراؤنڈ شندور پہنچ گئے جہاں دو روز پڑاؤ کے بعد گلگت بلتستان کی جانب اپنے نئے سفر کاآغاز کرینگے۔ محکمہ سیاحت خیبرپختونخوا کے زیرانتظام خیبرپختونخوا کلچراینڈٹورازم اتھارٹی، سیاح ٹریولز اور ایپو بائیکرز کلب ملیشیاء کے زیراہتمام 22 موٹربائیکرز پر مشتمل ریلی اپرچترال کے علاقے اورسطح سمندر سے 12ہزار 700فٹ بلندی پر واقع شندور پولو گراؤنڈ (شندورٹاپ) پہنچ گئی۔بائیکرز ریلی ہندوکش، ہمالیہ اور قراقرم کے پہاڑی سلسلے میں تقریباً 19 سو 50 کلومیٹر کا سفر طے کریگی۔ موٹر بائیکرز پر مشتمل ریلی کاآغاز اسلام آباد سے 13 مئی کو ہوا جس میں بائیکرز سوات سے ہوتے ہوئے چترال، کالاش، گرم چشمہ، بونی، مستوج اور پھرشندور ٹاپ پہنچے۔بائیکرز نے ملاکنڈ ڈویژن کے مختلف سیاحتی مقامات پڑاؤ ڈالا اور سیر و تفریح کیساتھ ساتھ مقامی کھانوں سے بھی لطف اندوز ہوئے۔

ملیشیئن بائیکرز کلب کے گروپ لیڈر اور سابقہ ملیشیئن موٹرسائیکل ریسر وسیع بن عبدالحمید کا کہنا تھا کہ شندور ٹاپ سمیت خیبرپختونخوا کے سیاحتی مقامات دنیا کے حسین ترین مقامات میں بھی اپنی خصوصیت کے حامل ہیں۔ ہم دیگر ممالک میں بھی سیر و تفریح کیلئے گئے مگر جو پہاڑی سلسلہ خیبرپختونخوا میں دیکھنے کو ملا وہ کہیں نہیں تھا۔ انہوں نے کہاکہ خیبرپختونخوا کلچراینڈٹورازم اتھارٹی، سیاح ٹریولز اور پولیس نے اس ریلی کو مکمل سپورٹ فراہم کی جس کے شکر گزار ہیں۔پاکستان اورخصوصاً خیبرپختونخوا کے سیاحتی مقامات بہت خوبصورت ہیں اور یہاں کے لوگ محبت کرنے والے اور مہمان نواز ہے۔ انہوں نے دیگر غیر ملکی سیاحوں کو پیغام دیتے ہوئے کہاکہ پاکستان پرامن ملک ہے یہاں کسی قسم کا کوئی خطرہ نہیں ہے سیاح بغیر کسی خوف کے پاکستان سفر کرسکتے ہیں۔سیاح ٹریولز کے بانی یوسف اختر کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہے کہ خیبرپختونخوا میں سیاحت کو فروغ دیا جائے اسی وجہ سے ملیشیئن بائیکرز کلب کے گروپ کو پاکستان لائے ہیں۔ اس کے علاوہ دیگر گروپ بھی پلان میں ہیں جو کہ عنقریب پاکستان اور خصوصاً خیبرپختونخوا کا رخ کرینگے۔ ملیشیاء سے آئے بائیکر ازلان بن محمد سید کا کہنا تھا کہ خیبرپختونخوا کے سیاحتی مقامات کا بائیک پر سفر انتہائی شاندارہے۔یہاں کے لوگ مہمان نواز ہیں جنہوں نے جگہ جگہ ہمارا استقبال کیا اور خوش آمدید کہا۔ میں اپنی آمد کے بعد یہاں خود کو بہت محفوظ محسوس کررہا ہوں۔

chitraltimes KPCTA malacian bikers reached shandur via mastuj upper chitral 7

chitraltimes KPCTA malacian bikers reached shandur via mastuj upper chitral 2

chitraltimes KPCTA malacian bikers reached shandur via mastuj upper chitral 6 chitraltimes KPCTA malacian bikers reached shandur via mastuj upper chitral 3 chitraltimes KPCTA malacian bikers reached shandur via mastuj upper chitral 4 chitraltimes KPCTA malacian bikers reached shandur via mastuj upper chitral 1

 


شیئر کریں: