Chitral Times

Oct 2, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے عام انتخابات کے لئے قومی اسمبلی وصوبائی اسمبلیوں کے لئے حلقہ بندیوں کے شیڈول کا اعلان کر دیا

Posted on
شیئر کریں:

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے عام انتخابات کے لئے قومی اسمبلی وصوبائی اسمبلیوں کے لئے حلقہ بندیوں کے شیڈول کا اعلان کر دیا

اسلام آباد ( چترال ٹایمز رپورٹ ) الیکشن کمیشن آف پاکستان نے عام انتخابات کے لئے قومی اسمبلی وصوبائی اسمبلیوں کے لئے حلقہ بندیوں کے شیڈول کا اعلان کر دیا ہے آج سے ملک بھر میں کہیں بھی کوئی نیا انتظامی یونٹ نہیں بنایا جائیگا۔تمام صوبوں کے لئے حلقہ بندی کمیٹوں کی تشکیل 16اپریل 2022تک کر دی جائے گی۔ تمام چیف سیکرٹری اور صوبائی الیکشن کمشنر ز کو حلقہ بندی کے کام کے لئے مطلوبہ نقشہ جات ودیگر دستاویزات کی فراہمی کی ہدایت۔ 11اپریل 2022سے 26اپریل 2022تک مطلوبہ نقشہ جات و دیگر دستاویزات کی فراہمی کی جائے گی۔20اپریل 2022سے 24اپریل 2022تک حلقہ بندی کمیٹوں کی ٹریننگ کی جائے گی۔جبکہ ابتدائی حلقہ بندیوں کی اشاعت 28مئی 2022کو کر دی جائے گی۔ 29مئی 2022سے 28جون 2022تک ابتدائی حلقہ بندیوں پر عوام اپنے اعتراضات اور سفارشات الیکشن کمیشن کے سامنے پیش کریں گے۔ الیکشن کمیشن تمام اعتراضات کی سماعت اور فیصلے یکم جولائی 2022سے 30جولائی 2022تک انجام دے گا۔ حلقہ بندیوں کی حتمی فہرست 3اگست 2022کو شائع کی جائے گی۔

 

 

 

 

الیکشن کمیشن آف پاکستان میں چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی صدارت اجلاس،

اسلام آباد ( چترال ٹایمز رپورٹ )آج الیکشن کمیشن آف پاکستان میں چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی صدارت میں ایک اہم اجلاس ہوا جس میں ممبران الیکشن کمیشن کے علاوہ سیکرٹری الیکشن کمیشن اور الیکشن کمیشن کے دیگر سیئنر افسران نے شرکت کی۔

اجلاس میں بتایا گیا کہ الیکشن کمیشن کو صوبہ پنجاب ، بلوچستان، سندھ اور اسلام آباد کے بلدیاتی انتخابات سمیت عام انتخابات میں مطلوبہ فنڈز کی فراہمی کے لئے مسلسل مسائل کا سامنا ہے جس کی وجہ سے شدید مشکلات پیش آ رہی ہیں اور اہم آئینی امور مجوزہ بالا انتخابات کے انعقاد کے لئے متاثر ہورہے ہیں۔الیکشن کمیشن نے اس پر شدید ردعمل کا اظہار کیاکہ اس طرح سے نہ صرف الیکشن کمیشن کی آئینی و قانونی ذمہ داری میں مشکلات پیدا کی جار ہی ہیں بلکہ معزز عدالت عظمی سپریم کورٹ کے بلدیاتی الیکشن کے انعقاد کیحوالے سے مورخہ 15مارچ 2021اور مورخہ 25مارچ 2021کے احکامات کی بھی مکمل خلاف ورزی ہے۔اس لئے الیکشن کمیشن نے فیصلہ کیا کہ رجسٹرار سپریم کورٹ کو بھی عدالت عظمی کے احکامات کی روشنی میں صورتحال سے آگاہ کیا جائے۔ کیونکہ اس کی وجہ سے بلدیاتی انتخابات جوپہلیہی تاخیر کا شکار ہوچکے ہیں اب مزید ان کے انعقاد میں تاخیرکا خدشہ ہے۔

مزید برآں سیکرٹری الیکشن کمیشن کو ہدایت کی گئی کہ و ہ اس سلسلے میں فیڈر ل سیکرٹری خزانہ اور متعلقہ چیف سیکرٹریز سے بھی بات کریں اور جلد از جلد اس معاملے کو حل کریں۔


شیئر کریں: