Chitral Times

Oct 6, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

خیبر پختونخوا میں جنگل کی آگ سے بچاؤ کی پیشگی تیاریاں

Posted on
شیئر کریں:

خیبر پختونخوا میں جنگل کی آگ سے بچاؤ کی پیشگی تیاریاں

پشاور(نمایندہ چترال ٹایمز)محکمہ جنگلات ماحولیات و جنگلی حیات خیبر پختونخوا نے صوبہ بھر میں جنگلات کو آگ سے محفوظ رکھنے کے لئے ہنگامی طور پر اقدامات کرنے کی تیاریاں شروع کر دی ہیں ۔ ترجمان محکمہ جنگلات خیبر پختونخوا لطیف الرحمان کے مطابق صوبہ خیبر پختونخوا میں عام طور پر گرم موسم، خشک سالی، ہواؤں، ایندھن کی قسم، کوڑا کرکٹ، خشک جغرافیائی محل وقوع، انسانی لاپرواہی وغیرہ کی وجہ سے ہمیں 15 اپریل کے بعد “جنگل میں آگ” کے موسم سے ہوشیار رہنا پڑتا ہے۔اس سلسلے میں، وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کی منظوری سےتفصیلی ایس او پیز بنیادی طور پر اعلامیہ میں وضع کیے گئے ہیں ۔اعلامیہ کے مطابق کمشنر کی سربراہی میں تمام اسٹیک ہولڈرز سمیت ڈویژنل فاریسٹ فائر مینجمنٹ ٹیم کے ذریعے نگرانی کے انتظامات وضع کر دئے گئے ہیں۔

ترجمان محکمہ جنگلات کے مطابق فاریسٹ فائر مینجمنٹ ٹیم کو پیشگی خطرات کا نقشہ بنانا ہے اورمتعلقہ محکموں کو باضابطہ طور پر ذمہ داری تفویض کرنا ہے جبکہ جان بوجھ کر منفی کارروائی کے لیے مجرموں کے خلاف تعزیری اقدامات کرنا ہے۔عام انتظامات میں محکمہ جنگلات کی طرف سے فائر لائنز کی نشاندہی، فائر فائٹنگ سیٹ اپ میں ریسکیو 1122 کی مدد، مئی اور ستمبر کے درمیان دفعہ 144 کا نفاذ آتش بازی/کیمپ فائر وغیرہ پر پابندی، گھاس پھوس کو ہٹانے کے ساتھ سرکاری تنصیبات کے ذریعے بفر زون بنانااور عوامی آگاہی شامل ہیں۔ ہنگامی انتظامات میں خاص طور پر پرائیویٹ جنگلات اور بنجر زمینوں کے لیے، بشمول “انسیڈنٹ کمانڈر” کی نامزدگی، محکمہ جنگلات کی طرف سے سرکاری جنگلات میں آگ کا انتظام اور دیگر اقدامات شامل ہیں ۔

ترجمان محکمہ جنگلات نے مزید کہا کہ یہ ہدایات کمشنرز اور ڈپٹی کمشنرز کو اس درخواست کے ساتھ دہرائی گئی ہیں کہ جلد از جلد فاریسٹ فائر منیجمنٹ ٹیموں کے اجلاس بلائے جائیں تاکہ پہلے سے جاری کردہ ایس او پیز کے مطابق انتظامات اور کوآرڈینیشن کا جائزہ لیا جا سکے اور ساتھ ہی مزید بہتری بھی ہو۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ جنگلات کی فیلڈ فارمیشنز کے لیے چیف کنزرویٹرز فاریسٹ کو مزید اقدامات کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔فائر لائنز کے حوالے سے ان کی پہلے سے منصوبہ بندی کی جانی چاہیے اور ان کو شروع کرنے سے پہلے وسیع پیمانے پر تشہیر کی جانی چاہیے ۔GPS کے ذریعے پچھلے 10 سالوں میں جنگل میں لگنے والی آگ کی منصوبہ بندی ہاٹ اور ہاٹ سپاٹ کی نشاندہی شامل ہیں۔جہاں ممکن ہو مشاہداتی پوسٹس کی تکمیل (جیسے مکنیال) اور آگ کے کسی بھی خطرے سے نمٹنے کے لیے ڈرون کے ذریعے روزانہ مشاہدے سے اس کی مدد کی جانی چاہیے۔ریپڈ ریسپانس ٹیمیں، جو آگ بجھانے کے لیے وقف ہیں، ان کے سامان کے ساتھ اس کے بعد ممکنہ حد تک ہاٹ سپاٹ کے قریب رکھی جائیں۔محکمہ جنگلات نے گاؤں کی کمیٹیوں، مساجد، حجروں وغیرہ اور عوامی نمائندوں کے ذریعے متعلقہ کمیونٹیز میں سماجی متحرک مہمات کو جاری رکھنے کی ہدایت دی گئی ہے۔


شیئر کریں: