Chitral Times

Oct 3, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

آغا خان ہائر سیکنڈری سکول کوراغ کا ایک اور کا میا بیوں سے بھرا سال – تحریر: عبداللہ خان

شیئر کریں:

آغا خان ہائر سیکنڈری سکول کوراغ کا ایک اور کامیابیوں سے بھرا سال – تحریر: عبداللہ خان

کسی بھی تعلیمی ادارے کے لیے اس سے بڑھ کر کوئی اعزاز نہیں کہ اس ادارے میں پڑھنے والے کامیابی کی سڑھیاں چڑھیں۔
کچھ ایسا آغا خان ہائر سیکنڈری سکول کے اس سال میں ہوا کہ ایک سال میں ادارہ ہذا سے 12 طالبات میڈیکل سیٹ میں،8 طالبات BSCN کے ٹسٹ میں ،2 طالبات بیرونی ہونیورسٹیز کی سیٹ میں جبکہ 1 طالبہ LUMS میں داخلہ لینے میں کامیاب ہوئی ہے۔


یہ ایک صوبائی ریکارڈ بن گیا ہے کہ ایک کلینڈر سال میں میڈیکل سیٹ میں ایک اردے سے 12 طالبات کامیاب ہوئی ہیں۔ تفصیلات کے مطابق سال 2021 کے بیچ میں 8 طالبات صوبائی میڈیکل سیٹ کے اوپن میرٹ میں کامیاب ہوئی ہیں/جبکہ 4 طالبات ملک کی سب سے بڑی یونیورسٹی آغا خان میڈیکل یونیورسٹی میں ایم ایم سیٹ سنھبالی ہیں اسی طرح MDCAT کے ٹسٹ میں کامیاب ہونے والوں میں کوغذی سےلائیبہ نور، انارہ تانیہ حسین پرکوسپ، عالیہ فرح غفارآوی، کائنات قبادمستوج، رخسار عامر چرون، مرورید افسرکوراغ، رخسانہ تسنیم لاسپوراور ثوبانہ رحمان ریشن شامل ہیں ۔ اس طرح اے کے یو میں الوینہ محمد خان بونی ، نازیہ مہوش بریپ، افسانہ پری لٹکوہ اور شازیہ ولی لاسپورشامل ہیں۔UCA کے ٹسٹ میں ماہین علی میر بونی اور سدرہ عالم کامیاب ہوئی ہیں۔ پاکستان کی سب بڑی یونیورسٹی LUMS میں سو فیصد سکالرشپ پر بھی ایک طالبہ مہک عالم بونی داخلہ لینے میں کامیاب ہوئی ہے۔ اس طرح اسی سال کے ہی 8 طالبات اے کے یو میں BSCN پروگرام میں داخلہ لینے میں کامیاب ہوئی ہیں۔ اور یاد رہے MDCAT کے ریزو سیٹ کے رزلٹ کا آنا باقی ہے جس میں 4 اور طالبات ویٹنگ لسٹ میں موجود ہیں۔ صوبہ خیبر پوختونخواہ کے اندر پہلی بار ایسا ہوا ہے کہ ایک سال میں ایک ادارہ اتنی کامیابیاں سمیٹی ہو۔


ان سب کی کامیابی پر آغا خان ہائرسیکنڈری سکول کوراغ کی پرنسپل سلطانہ برہان الدین نے اپنے ایک پیغام میں اس کامیابی کو طالبات اور اساتذہ کی محنت اور ٹیم ورک کا نتیجہ قرار دیا ہے اور شاباشی دیتے ہوئے کہا کہ آئندہ بھی اس طرح کی کامیابی کے لیے پُرامید ہیں۔اس سلسلے میں سکول ہذا کو چترال کے ہر مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے افراد کے تحسینی پیغامات موصول ہورہے ہیں جس کے لیے ہم شکرگزار ہیں۔ الغرض یہ سال بہت سے چلینجز کے باوجود سکول کے لیے ایک کامیاب سال رہا ہے۔


شیئر کریں: