Chitral Times

Nov 29, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

ڈاکٹر ملا علی کوردستانی سری لنکا پہنچ گئے، پاکستان میں ایلیٹ طبقہ سبقت لے گیا، غریب گلی کوچوں میں خوار

شیئر کریں:

ڈاکٹر ملا علی کوردستانی سری لنکا پہنچ گئے، پاکستان میں ایلیٹ طبقہ سبقت لے گیا، غریب گلی کوچوں میں خوار

اسلام آ باد (نمائندہ چترال ٹائمز) عراق سے آئے ہوئے ڈاکٹر ملا علی کوردستانی تقریبا تین ہفتے پاکستان میں گزارنے کے بعد واپس چلے گئے ہیں۔ ڈاکٹر ملا علی کے مطابق وہ قرآنی آیات سے بولنے، سننے کی بصارت سے محروم افراد کا روحانی علاج کرتے ہیں۔ اور مختلف ویڈیو ز میں دیکھائے گئے ہیں کہ وہ گونگے، بہرے اور معذور افراد کا علاج کررہے ہیں۔ اور وہ اُسی وقت بولنے، سننے یا چلنے کے قابل ہوجاتے ہیں۔ اُسکی علاج میں حقیقت ہے یا نہیں، اس کے متعلق کچھ نہیں کہا جاسکتا۔


ڈاکٹر ملاعلی نومبر کے پہلے ہفتے جب لاہور پہنچا تو عوام کی ایک جم غفیر نے ائیرپورٹ پر انکا پرتباک استقبال کیا۔ وہ تقریبا دس دن لاہور میں رہے۔ اس سے قبل عراق سے اپنے ایک ویڈ یو پیغام میں اس نے اعلان کیا تھا کہ وہ پاکستان میں غریبوں کا مفت علاج کرنے آرہے ہیں، لاہور، کراچی، اسلام آباد اور پشاور میں غریبوں کا طب نبوی کے زریعے علاج کریں گے۔ مگر وہ پاکستان پہنچنے کے بعد غریب کا علاج تو درکنار ان کے پاس بھی جانے نہیں دیا گیا۔ وہ ایلیٹ طبقے کے ہتھے چڑھ گیا، لاہور میں صوبائی وزرا ، وی آئی پیز سے ملاقات اور انکی مریضوں کو دیکھنے کے بعد جب اسلام آباد آیا، تو سینیٹرز، ایم این ایز، وزراء، اسپیکر قومی اسمبلی، سابق وزیراعظم جیسے لوگوں کے ہاں ہی یرغمال ہوکے رہ گیا۔ اور ایلیٹ طبقہ اپنے عزیزواقارب کیلئے ٹائم لینے میں کامیاب رہا، تاہم یہ معلوم نہیں کہ کتنے لوگوں کی علاج ممکن ہوئی۔جبکہ غریب عوام دردر کی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہوگئی، کبھی اسلام آباد تو کبھی پشاور حیات آباد کے مختلف گلی کوچوں میں خوار ہوتے رہے۔ بلااخر گزشتہ دن ڈاکٹر ملاعلی پاکستان کے وی آئی پیز سے جان چھڑاکر اسلام آباد سے فلائٹ پکڑ لیا اور سری لنکا پہنچ گیا۔ جہاں انھوں نے ہسپتال کھولنے کا بھی اعلان کیا ہے۔


ستم ظریفی یہ ہے کہ پاکستان کی وی آئی پی کلچر نے جس طرح ملک کی معیشت کا بیڑہ غرق کیا ہے اسی طرح انھوں نے غریبوں کی ایک مسیحا کو بھی نہیں چھوڑا۔ جس کی وجہ سے دوردراز سے آئے ہوئے لوگ دو ہفتوں سے لاہور، اسلام آباد اور پشاور حیات آباد میں خوار ہونے کے بعد خالی ہاتھ گھروں کو واپس لوٹ گئے۔ ان لوگوں میں چترال سے بھی درجنوں افراد اپنے عزیز واقارب کو لیکر پشاور پہنچے تھے۔ جو تقریبا ایک ہفتہ ہوٹلوں میں انتظار کے بعد مایوس واپس ہوگئے۔

chitraltimes dr mohammad ali kurdistan pakistan visit 7
chitraltimes dr mohammad ali kurdistan pakistan visit 1
chitraltimes dr mohammad ali kurdistan pakistan visit 3
chitraltimes dr mohammad ali kurdistan pakistan visit 2
chitraltimes dr mohammad ali kurdistan pakistan visit 4
chitraltimes dr mohammad ali kurdistan pakistan visit 5
krt

ڈاکٹر ملا علی کوردستانی سری لنکا پہنچ گئے، پاکستان میں ایلیٹ طبقہ سبقت لے گیا، غریب گلی کوچوں میں خوار


شیئر کریں: