Chitral Times

Sep 20, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

سول آرمڈ فورسز سوسائٹی کا قیام،عبد الصمد اور محمد اسلام بالترتیب لوئراوراپرچترال کے چیئرمین مقرر

شیئر کریں:

چترال (چترال ٹائمز رپورٹ ) حال ہی میں پاکستان میں سول آرمڈ فورسز کے نیم فوجی پنشنئیر سوسائٹی کے نام سے ایک سوشل ویلفیئر اور باہمی تعاون سے متعلق تنظیم کی بنیاد رکھی گئی ہے۔ یہ تنظیم ان نامور بے قاعدہ فوجی قوتوں کے ریٹائرڈ افراد پر مشتمل ہے جسے حکومت فرنٹیئر کور ، رینجرز ، فرنٹیئر کانسٹیبلری اور کوسٹ گارڈز کے اور عوامی اور سول مسلح افواج کا نام دیتی ہے جبکہ عام زبان میں انکو ملیشیا کا نام دیا گیا ہے۔ تنظیم کے صوبائی ، ضلعی اور تحصیل پر مبنی یونٹ ہیں جو نیچے بنیادی محلہ اور دیہاتی سطح تک چلتے ہیں۔ فی الحال اس تنظیم کی حلقہ بندی کا عمل ملکی سطح پر جاری ہے۔


اس معاشرتی بہبود اور فلاحی تنظیم کے مقاصد سول آرمڈ فورسز کے تمام سابق فوجیوں کے مابین تعاون پیدا کرنا اور ضرورت کے وقت حکومت پاکستان کے دیگر اداروں کے ساتھ بطور امدادی کام کرنا ہے۔ یہ ایک غیر نسلی ، غیر لسانی اور غیر فرقہ پرست وفادار تنظیم ہے جو نہ صرف اپنے ہی ساتھیوں کی بہتری کے لئے کام کرنا چاہتی ہے بلکہ اس کا مقصد عام لوگوں اور ضرورت مند لوگوں کی اپنی صلاحیت اور استطاعت کے مطابق خدمت کرنا بھی ہے۔ یہ سوسائٹی پاکستان کی مختلف قومی اور شہری مسلح افواج کے پنشنئرز پر مبنی ہے جنہوں نے ملک کے دفاع اور فلاح و بہبود میں بہت بڑا کردار ادا کیا ہے۔

انہوں نے میدان میں اپنی ذمہ داری بخوبی نبھائی ہے اور اب اس انجمن سے وابستہ ریٹائرڈ افراد کی حیثیت سے وہ آگے بھی قوم کی خدمت کرنے کی کوشش کریں گے۔ اگر ان کی مناسب مدد، سرپرستی ، گروہ بندی اور استعمال کیا جائے ہے تو یہ سوسائٹی ایسے مشکل پسند پہاڑی اور صحرائی افرادی قوت رکھتی ہے جن میں مستری سے بڑھئی تک، توپچی سے نشانہ باز تک اور پکانے والے سے لے کر کاریگر تک تقریبا تمام قسم کے ہنر رکھنے والے بہترین تربیت یافتہ افراد موجود ہیں۔ یہ افراد شہری دفاع ، فلاح وبہبود، بچاؤ اور دیگر ضرورت کے اوقات میں قوم کیلئے اپنا کردار بخوبی ادا کرسکتے ہیں۔ یہ تعمیرات اور سماجی کاموں کو بھی انجام دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں .
تنظیم کی طرف سے ریٹائرڈ کیپٹن عبد الصمد اور سابق جونیئر کمیشنڈ آفیسر محمد اسلام کو بالترتیب چترال کے پائین اور بالائی اضلاع کے لئے مذکورہ تنظیم کا چیئر مین مقرر کیا گیا ہے۔


شیئر کریں: