Chitral Times

May 28, 2022

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

اظہار تعزیت……شمسیار خان بونی

شیئر کریں:

بونی ( نمائندہ خصوصی)   بونی ٹیک لشٹ سے شمسیار خان ( ریٹائرڈ زراعت افیسر) نے چترال کی معروف شخصیت  مولانا اشرف کی وفات پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ مولانا  اشرف ( موحوم ) جیسی شخصیات صدیوں میں پیدا ہوتی ہیں ۔  موحوم نے ہمارے معاشرے کو  تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنے میں جو کردار ادا کیا ہے وہ چترال کی تاریخ میں سنہرے حرو ف سے لکھا اور یاد کیا جائے گا ۔ اگر ہم مولانا ( مغفور ) کے گاؤں کی بات کریں تو بالیم جیسے ایک چھوٹے سے گاوں میں  پی ایچ ڈی اسکالر ، فوجی افیسر ، انفارمیشن کے  میدان کے شہسوار اورپائے کا  قانوں دان کے  پیدا ہونے میں  کوئی نہ کوئی دور اندیش ذہن کارفرما رہا ہوگا کہ جس نے اپنے علاقے کے نونہالوں کو نور کا راستہ کھایا  ۔   مولانا (مرحوم  ) نے اپنی پہلی ملازت سے سبکدوش ہونے نے کے بعد اپنی  باقی زندگی کا بیشتر حصہ  درس و تدریس میں گزارا  اور آج اُن کی محنت کی برکت سے اُں کا علاقہ سونا اگلنے لگا ہے ۔  موت برحق ہے  کیوں کہ زندگی  اور موت ایک دوسرے کےلئے  لازم و ملزوم ہیں   ۔ ہماری دعا ہے کہ اللہ تبارک وتعالی  مولانا ( مرحوم )کی  دائمی زندگی کو خوشیوں اور سکون سے مالا مال رکھے ۔  آمیں

            انہوں نے کہا ” میں موجودہ وبائی صورت حال کے پیش نظر ڈاکٹر صاحب کی تعزیت کےلئے نہیں جا سکا جس کے لئے میں ڈاکٹر صاحب سے معافی کا طالب ہوں “


شیئر کریں: