Chitral Times

May 16, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

موردیرقتل کے ملز م نے عدالت کے روبرو اقرارجرم کرلیا، جوڈیشل حوالات منتقل۔ڈی پی او اپر چترال

شیئر کریں:

اپر چترال (نمائندہ چترال ٹائمز )اپر چترال کے تھانہ موڑکہو کے حدود میں نوجوان حیدرزمان کی پراسرار قتل کا معمہ حل ہوگیا، اپر پولیس نے ملزم عظیم اللہ ولدمحمدنسیم سکنہ موردیرکو آلہ قتل سمیت گرفتار کرلیا اورآج مقامی عدالت میں پیش کیا گیا جہاں انھوں نے اقرار جرم کرلیا ہے ۔جس پرعدالت نے انھیں جوڈیشل ریمانڈ پر چترال جیل بھیج دیا۔


ڈی پی او اپر چترال زوالفقار علی تنولی نے اس حوالے سے بتایا کہ انھیں قتل کے واردات کی اطلاع ملتے ہی انھوں نے نامعلوم ملزم کو ٹریس کرکے گرفتار کرنے کیلۓ خصوصی ٹیم زیرنگرانی عبدالمظفرشاہ SDPO سرکل مولکہو تشکیل دیا تھا، خصوصی ٹیم نے تمام دستیاب وسایل بروۓ کار لاتے ہوۓ جدید زاویوں پر تفتیش کرتے ہوۓ قاتل مسمی عظیم اللہ ولد محمدنسیم سکنہ موردیرکو گرفتار کرلیا، تفتیش کے دوران ملزم نے جاۓ وقوعہ کی نشاندہی کی اور اعتراف جرم بھی کرلیا۔ ملزم کی نشاندہی پر آلہ قتل 12 بور بندوق اور خول برامد کی گئی۔


پولیس کی فوری اور کامیاب کاروائی پر عوامی حلقوں نے پولیس کی کارکردگی کو سراہا ہے۔
ذرائع کے مطابق قتل کی وجہ مقتول کے بڑے بھائی کے ساتھ عداوت تھی۔ملزم نے بتایا ہے کہ وہ اصل میں حیدر زمان کے بڑے بھائی کو مارنا چاہتے تھے مگر رات کی تاریکی میں چھوٹا بھائی نشانہ بنی۔


شیئر کریں: