Chitral Times

Jan 25, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

چترال کو منشیات سے پاک اور خواتین میں خودکشی کے واقعات کا سدباب کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑیں گے۔ ڈی پی او سونیا شمروزخان

شیئر کریں:

چترال ( نمائندہ چترال ٹائمز ) ڈی پی او لویر چترال سونیا شمروز خان نے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ چترال کو منشیات سے پاک کرنے، خواتین میں خود کشی کے واقعات کا سدباب کرنے، چترال شہر میں موٹر گاڑیوں کی ٹریفک کا نظام بہتر بنانے اور عوام اور پولیس کے درمیان فاصلے کو کم سے کم کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑیں گی۔ جمعرات کے روز صدر ظہیر الدین کی قیادت میں چترال پریس کلب کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ منشیات فروشی چترال میں مسئلے کی صورت اختیار کر گئی ہے جس سے نمٹنے کے لیے روایتی انداز سے ہٹ کر اقدامات کئے جائیں گے اور منشیات سپلائی کرنے والوں کا قلع قمع کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ خواتیں کی خودکشی کے وجوہات کی تہہ تک پہنچنا ہوگا۔ انہوں نے مزید کہا کہ عوام کو کسی بھی شکایت کی صورت میں دستیابی کو یقینی بنایا جائے گا جس کے لئےفون نمبر03461119337پر مسیج یا واٹ آپ پر شکایت کی تفصیل درج کی جاسکتی ہے جس فوری طور پر ایکشن لیا جائے گا۔ انہوں نے کہاکہ ٹریفک کے نظام کو مستحکم کیا جائے گا اور خصوصاً کم عمر موٹر سائیکل سواروں کی حوصلہ شکنی کی جائے گی۔ ہیلمٹ کو سب کیلئے لازمی کرنے کے ساتھ پٹرول پمپوں پر خصوصی ہدایت دیں گے جہاں بیغیر ہیلمٹ کے آنے والے موٹرسائکلسٹ کو پٹرول نہیں دیا جائیگا۔

دریں اثنا ڈی پی او سونیا شمروز خان کی زیر صدارت ان کے آفس میں پولیس افسران کا ایک تعارفی میٹنگ کا انعقاد کیا گیا۔

میٹنگ میں ایس پی انیوسٹیگشن، DSP ہیڈ کوارٹر تمام SDPOs اور SHOsنے شرکت کی۔ DPO نے شرکاء سے تعارف کروائی۔ اس موقع پر انھوں نے شرکاء میٹنگ سے مخاطب ہو کر ہدایات کی کہ میں اپنے ضلع میں منشیات کو برداشت نہیں کر سکتی۔ کسی کو بھی نوجوان نسل کی مستقبل سے کھیلنے کی اجازت نہیں دی جائیگی۔ اس سلسلے میں ایک اسپشل ٹاسک فورس تشکیل دی جارہی ہے۔ SHOs بھی عوام کو اپنے اعتماد لیکر منشیات کے خلاف بھرپور کاروئی کریں۔عوام سے اپیل کی کہ چترال کو منشیات سے پاک کرنے میں ہمارا ساتھ دیں۔


شیئر کریں: