Chitral Times

Nov 28, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

کالاش کی معروف شخصیت آمدن شاہ ڈھول کی تھاپ پر سپرد خاک، 30 بکرے،دو من دیسی گھی کی ضیافت

شیئر کریں:

چترال ( محکم الدین ) ہفتے کے روز کالاش ویلی بمبوریت کے مقام برون میں تینوں کالاش ویلیز کے سینکڑوں افراد نے آشکبار انکھوں سے معروف کالاش شخصیت آمدن شاہ کو آخری رسومات کی آدائیگی کے بعد فائرنگ کی گھن گرج اور ڈھول کی تھاپ پر ماتمی گیت اور رقص کے ساتھ سپرد خاک کردیا۔ آمدن شاہ کالاش ویلی رومبور چترال سے تعلق رکھنے والی بین الاقوامی شہرت یافتہ پاکستانی نژاد امریکی خاتون الیکشن بی بی کے ماموں اور معروف خاتون لیڈر و سوشل ایکٹی وسٹ شاہی گل کے شوہر تھے ۔ جو گزشتہ کچھ عرصے سے علیل تھے ۔ اور علاج کیلئے انہیں چترال پشاور اور اسلام آباد کے ہسپتالوں تک لے جایا گیا ۔ لیکن وہ جانبر نہ ہوسکے ۔

انجہانی آمدن شاہ کی آخری رسومات کی آدائیگی میں تینوں ویلز سے بہت بڑی تعداد میں لوگوں نے حصہ لیا ۔ کالاش رسم کے مطابق انجہانی کی میت کو مقامی جشٹکان میں رکھا گیا تھا ۔ جس میں ان کی بیوہ بیٹیوں اور قریبی رشتےدار خواتین ننگے سر ماتمی گیت گاکر سوگ کا اظہار کیا ۔ تو قبیلے کے مذہبی پیشوا نے باری باری قبیلے کیلئے ان کی خدمات پر شاندار الفاظ میں انہیں خراج عقیدت پیش کیا ۔ میت کےسرہانے کالاش قبیلے کے رواج کے مطابق انجہانی کی بہادری اور شجاعت سے متعلق سامان حرب رکھے گئے تھے ۔

انہیں نوٹوں کا ہار پہنایا گیا تھا۔ اور ان کی پسند کے پھل ، خوراک کی اشیاء رکھے گئےتھے۔ کالاش مذہب میں آخری سفر کیلئے یہ توشہ جشٹکان میں میت کے ساتھ رکھا جاتاہے ۔ جنہیں مردے کے ساتھ تابوت میں بھی رکھ دیا جاتا ہے۔ انجہانی آمدن شاہ کی تعزیت کیلئے آنے والوں کو حسب روایت مخصوص ڈش کی ضیافت دی گئی ۔

جس کیلئے مجموعی طور پر 30 بکرے ایک گائے ذبح کئے گئے ۔ دو من دیسی گھی ، 120کلوگرام پنیر ، 37من آٹا اور 200من سوختنی لکڑیاں کھانا پکانے اور آگ تاپنے کیلئے استعمال کی گئیں ۔ جن کی مجموعی مالیت 13لاکھ 32ہزار روپے ہے۔ کالاش مذہب کے مطابق یہ سوگ اگلے تہوار چلم جوشٹ تک جاری ریے گا ۔ اس دوران انجہانی کی بیوہ کو گھر کے اندر اور باہر بعض مخصوص مقامات پر جانے کی اجازت نہیں ہوگی ۔ انجہانی کی وفات پر قبیلے کے علاوہ لوگوں نے بھی صدمے کا اظہار کیا ہے ۔

kalash death chitral 2

شیئر کریں: