Chitral Times

Dec 2, 2020

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

محکمہ تعلیم نے ڈی پی ایس کے نتائج کا اعلان کردیا،ملاکنڈ اورکوہاٹ پہلے نمبر پر رہے

شیئر کریں:

پشاور (چترال ٹائمز رپور ٹ) محکمہ ابتدائی و ثانوی تعلیم خیبر پختونخوا نے ڈی ایف آئی ڈی کے تکنیکی تعاون سے نومبر2020کیلئے ڈسٹرکٹ پر فارمنس سکور کارڈ(ڈی پی ایس)کے نتائج کا اعلان کر دیا ہے۔ نظامت ابتدائی و ثانوی تعلیم میں منعقدہ اجلاس میں صوبے کے13اضلاع کے56مرد وخواتین ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسرز اور13ضم اضلاع کی کارکردگی کا جائزہ لیا گیا۔ جن کیلئے انڈیکیٹرز کوالٹی اور اعلیٰ تعلیم تک رسائی کیساتھ ساتھ کورونا صورتحال کے موقع پر سکولوں میں کئے گئے اقدامات کو بھی رکھا گیا تھا۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر تعلیم شہرام خان ترکئی نے کہا کہ محکمہ تعلیم میں سزاو جزا کا عمل برقرار رہے گا بہترین کارکردگی رکھنے والوں کو مراعات دی جائیں گی اور خراب کارکردگی دکھانے والوں کے خلاف کارروائی ہو گی۔انہوں نے کہا کہ آپ لوگوں کی سہولت کیلئے تبادلوں پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ تاکہ آپ طلباء اور سکولوں پر خصوصی توجہ سے سکیں۔ ہر ٹیچر سکول میں حاضر رہے گا۔ آئی ٹی لیبز موجود ہیں ان سے فوائد حاصل کریں۔ طلباء کی حاضریوں پر خصوصی توجہ دیں ان کا وقت بڑا قیمتی ہے۔ وزیر تعلیم نے کہا کہ سکولوں میں سہولیات کی فراہمی کیلئے عملی اقدامات کئے جائیں اور ایجوکیشن مانیٹرنگ اتھارٹی اور تمام ایجوکیشن حکام سکولوں میں ماسک کے استعمال کیلئے اقدامات کریں۔ تمام اساتذہ کلاس شروع کرنے سے پہلے طلباء کو موبلائز کریں اور کورونا سے متعلق حفاظتی اقدامات سے ان کو آگاہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ ای ٹرانسفر کی بدولت اب تبادلہ سال میں صرف ایک مرتبہ ہوگا اور ہماری کوشش ہے کہ منیجمنٹ کیڈر کی پوسٹنگ ٹرانسفر کارکردگی کی بنیاد پر کی جائے۔وزیر تعلیم نے ہدایت کی کہ2سالہ مدت کی تکمیل والے کلیریکل ملازمین کے تبادلے فورا کئے جائیں سکولوں والے کلرکس کو آفسز اور آفس والوں کو سکول بھیج دیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ اساتذہ و طلباء پر ہم خصوصی توجہ دے رہے ہیں اور جتنی بھی اصلاحات لارہے ہیں سب تعلیمی نظام کی بہتری کیلئے ہیں بریفنگ کے دوران وزیر تعلیم کو بتایا گیا کہ کورونا سے متعلق آگاہی کے سلسلے میں ملاکنڈ اور کوہاٹ پہلے نمبر پر رہے ہیں، ہری پور میل و فیمیل افسران نے بھی دوسرے انڈیکیٹرز میں پہلی پوزیشن حاصل کی۔ وزیر تعلیم شہرام خان ترکئی نے اس موقع پر پہلی پوزیشنز حاصل کرنے والے ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسرز کو سرٹیفیکیٹس دئیے۔ اور ان کے بہترین کام کی تعریف کی۔


شیئر کریں: