Chitral Times

Sep 26, 2020

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

شادر ریشن کے مقام پر دریائے کا رخ تبدیل کرنے کاکام شروع کردیاگیا۔۔ڈی سی

شیئر کریں:

اپر چترال (نماندہ چترال ٹائمز ) شاہ سعود ڈپٹی کمشنر اپر چترال کی ہدایات پر منہاس الدین ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریلیف اینڈ ایچ آر اپر چترال کے دفتر سےاپرچترال میں سیلاب اور دوسرے آفات سے متاثرہ جگہوں میں امدادی اور بحالی کی سرگرمیوں سے متعلق ہفتہ وار معلومات پیش کئے جارہے ہیں جوکہ ذیل ہیں۔۔ 1. ڈسٹرکٹ ایڈمنسٹریشن اپر چترال سیلاب سے متاثرہ دیہات یعنی ریشن اور یارخون لشٹ میں ایمرجنسی ڈیکلیئر کرنے کے لئے صوبائی حکومت کے ساتھ رابطے کیا ہے۔

2.اس ہفتے ریشن اور یارخون لشٹ کے سیلاب متاثرین میں امدادی چیک تقسیم کئے گئے۔ ریشن میں36 متاثرین کو امدادی چیک دیے گئے اور یارخون لشٹ میں 17 سیلاب متاثرین میں امدادی چیک تقسیم کئے گئے۔۔ باقیماندہ متاثرین کو بھی Claim Assessment Committee کی سفارشات کے بعد امدادی چیک دیے جائیں گے۔

3. ریشن اور یارخون لشٹ میں لوگوں کے سیلاب سے تباہ شدہ فصلوں کیAssessment کے لئے ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔

4. ایک رفاعی ادارہ MSF کی طرف سے امدادی اشیاء( NFIs) ڈسٹرکٹ ایڈمنسٹریشن اپر چترال کے حوالے کئےہیں وہ بھی متاثرین میں تقسیم کئے جائیں گے۔

۔ 5. سیلاب سے متاثرہ گاؤں ریشن میں اب تک 3 سیرابی نہریں بحال کئے جاچکے ہیں اور مذید 9 نہروں کی بحالی کے سلسلے میں کوششیں کی جاری ہیں۔

۔ 6. یارخون لشٹ میں متاثرین کے متاثرہ زمینوں اور فصلوں کی assessment ہوچکی ہے اس سلسلے میں Land Reclamation کےحوالے سے کوششیں کی جارہی ہیں۔

7. شادر کے مقام پر دریائے کے رخ کو دوسری طرف منتقل کرنے کا کام شروع ہو چکاہے۔ انشاء اللہ تعالیٰ اس سے علاقہ متاثر ہونے سے محفوظ رہے گی اور چترال شندور روڈ بھی منقطع ہونے سے بھی بچ جائے گا۔ اور ساتھ ساتھ متبادل راستے کی بھی نشاہدہی کی جاچکی ہے۔

8. ڈسٹرکٹ ایڈمنسٹریشن اپر چترال متاثرہ علاقوں میں نہروں کی بحالی کے لئے سرکاری اداروں اور مختلف NGOs کے ساتھ بھی رابطے میں ہے۔


شیئر کریں: