Chitral Times

Jul 3, 2020

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

گرم چشمہ ؛ انٹرنیٹ سروس کی عدم دستیابی کے خلاف طلباو طالبات کا احتجاجی مظاہرہ

شیئر کریں:

گرم چشدمہ (نمائندہ چترال ٹائمز ) گرم چشمہ میں پیر کے دن ڈی ایس ایل انٹرنٹ کی فراہمی میں حکومت اور پی ٹی سی ایل کی جانب سے بے جا تاخیر کے خلاف اسٹوڈنس کا ایک بھر پور احتجاجی مظاہرہ ہوا,جس کی قیادت لوٹکوہ اسٹوڈنٹ اسوسی ایشن کے  وسیم سجاد اور عرفان علی خان کر رہے تھے.مظاہرے میں گرم چشمہ سے تعلق رکھنے والے طلباء و طالبات, سیاسی اور سماجی رہنماؤں نے بڑی تعداد میں شرکت کی اور حکومت سے  بھر پور انداز میں مطالبہ کیا کہ جلد از جلد انٹرنٹ کے سہولت کو یقینی بنایا جاۓ کیونکہ یونیورسٹیز کی جانب سے آن لا ئن کلاسز کا اغاز ہو چکا ہے اور علاقے میں انٹرنٹ کی  عدم دستیابی کی وجہ سےسینکڑون طلباء کی کریئر داو پہ لگا ہے. شرکاء نے مطالبہ کیا کہ . 
۔گرم چشمہ اور لوٹکوہ کےدیگر علاقوں میں ڈی-ایس-ایل سروس بحال کیا جاے۔
۔لوٹکوہ کے وہ علاقے جہاں ٹیلی نار نیٹ ورک بلاک کیئے گیے ہیں اور ایرجنسی سروس لگا دی گئی ہے کوفوری کیا جائے۔
لوٹکوہ سمیت پورے چترال کے تمام پسماندہ علاقوں میں تھری جی اور فور جی سروس مہئیا کیا جائے۔ 
۔ 3G اور 4G کے بحال ہونے تک HEC آن لائن کلاس کے نام پر طلبا کو ذہنی ازیت سے دوچار نہ کریں 
۔ کورونا وبا ختم ہونے تک یونیورسٹی اور کالجوں مین فیسوں کی وصولی میں کمی کی جاے۔


شیئر کریں: