Chitral Times

Feb 27, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

کورونا وائرس سے 30 لاکھ خاندانوں کو بلا سود قرضہ کی ضرورت ہے۔۔اخوت کے بانی ڈاکٹر محمد امجد

شیئر کریں:

اسلام آباد (آئی آئی پی) کورونا وائرس (کوویڈ 19)کی وجہ سے 20 تا 30 لاکھ خاندانوں کو بلا سود قرضہ کی ضرورت ہے۔ کوویڈ 19 کے باعث ان افراد کے کمانے والے افراد کا روزگار ختم ہوا ہے، ان خاندانوں کی 10 تا 30 ہزار روپے کے بلا سود قرضے کی ضرورت ہے تاکہ مشکل کی اس گھڑی میں اپنی ضروریات پوری کر سکیں۔ ملک کے معروف سماجی کارکن بلا سود مائیکرو فنانس کے پہلے پاکستانی پروگرام اور اخوت کے بانی ڈاکٹر محمد امجد ثاقب نے کہا ہے کہ اخوت پہلے ہی اس کے لئے پروگرام کا آغاز کر چکی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اب وقت ہے کہ ہم وباسے متارہ افراد کی مدد کریں ورنہ مزید کئی خاندان غربت کی لکیر سے نیچے چلے جائیں گے۔ انہوں ن ے کہا کہ حکومت بھی 12 ملین ضرورت مندوں میں 12 ہزار روپے فی کس تقسیم کر رہی ہے۔ ڈاکٹر امجد ثاقب نے کہا کہ موجودہ صورتحال کافی مشکل ہے جو حقیقی معنوں میں بحیثیت قوم ہمارے عمل کی متقاضجی ہے۔ انہوں نے صاحب ثروقت افراد پر زور دیا کہ وہ ضرورت مند طبقات کی دل کھول کر مدد کریں۔ انہوں نے کہا کہ مسائل پر قابو پایا جا سکتا ہے جس کے لئے مشترکہ حکمت عملی کے تحت اقدامات کی ضرورت ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حالیہ بحران کے باعث ضرورت مند طبقات اور دیہاڑی دار مزدوروں کی مالی معاونت کی اشد ضرورت ہے۔ ڈاکٹر امجد ثاقب نے کہا کہ موجودہ صورتحال کے باعث ملک میں 20 تا 30 لاکھ خاندانوں کو فوری طورپر بلا سود قرضہ کی ضررت ہے جس کے لئے ہم سب کو مل کر کردار ادا کرنا ہو گا تاکہ لاکھوں افراد کو غربت کے چکر سے تحفظ فراہم کیا جا سکے۔


شیئر کریں: