Chitral Times

Sep 25, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

اخوت بینک کے قرضہ جات کی واپسی کی مدت میں توسیع کی جائے۔۔۔کھاتہ داراں

شیئر کریں:

چترال (نمائندہ چترال ٹائمز) چترال کے طول وعرض میں اخوت بنک کے سینکڑوں قرضداروں نے حکومت سے پرزور مطالبہ کیا ہے کہ ان کے لئے قرضہ جات کی اقساط کی واپسی کی مدت میں توسیع کی جائے کیونکہ ان کا کاروبار اس سال پہلے موسم سرما اور سخت برفباری اور پھر کئی مہینوں پر محیط لاک ڈاؤن کی وجہ سے متاثر ہوگئی ہے اور وہ بروقت اقساط واپس کرنے کی پوزیشن میں ہر گزنہیں ہیں۔ ایک اخباری بیان میں انہوں نے کہا ہے کہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے کاروبار کی بندش اور چھوٹے کاروباری لوگوں کی حالت زار سے سب واقف ہونے کے باوجود اخوت بنک کے اہلکار اب گھر گھر جاکر پہلے سے غربت اور فاقوں سے بدحال قرضداروں کو تنگ کرنے کا سلسلہ شروع کردیا ہے جس کا کوئی جواز نہیں بنتا۔ انہوں نے کہاکہ اس بنک کی انتظامیہ نے وزیر اعظم عمران خان کی ان احکامات کو بھی پس پشت ڈال دیا ہے جن میں انہوں نے قرضداروں سے تین مہینوں کے دوران قرضوں کی واپسی کا مطالبہ نہ کرنے کا حکم دیا تھا۔ قرضداروں نے بینک کے چیف ایگزیکٹیو سے اقساط کی واپسی کیلئے مہلت کی اپیل کی ہے۔


شیئر کریں: