Chitral Times

Apr 13, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

رامان لاسپور کے خستہ حال پل کو تعمیر کیا جاۓ….شریف الدین

شیئر کریں:

(سابقہ ممبر شریف الدین کا وزیر اعظم پاکستان اوروزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے نام اپیل)

میں شریف الدین ، ​​وادی رامان کا سابق یوسی کونسلر ہوں جو لاسپور ، تحصیل مستوج ، ضلع چترال میں واقع ہے اور آج میں حکومت کی توجہ اس پل کی طرف راغب کرنا چاہتا ہوں جو 1931 میں برطانوی حکومت نے رامان اور ہرچین کو مربوط کرنے کے لئے تعمیر کیا تھا۔

آج ۸۹ سال بعد یہ پُل مکمل طور پر تباہ ہو چکا ہے اور یوں وادی رامان کے ۱۵۰۰ کے قریب لوگوں کی زندگی بری طرح سے مفلوج ہوچُکی ہے کیونکہ زندگی کے بنیادی وسائل ہرچین میں موجود ہیں۔

کورونا وائرس کے ہنگامی صورت حال کی وجہ سے اس پسماندہ علاقے کے لوگ روزمرہ کی زندگی بڑی مشکل سے گزار رہے ہیں اور اب صورتحال مزید سنگین ہوسکتے ہیں کیونکہ یہی واحد پُل تھی جو آج تک آمدورفت کا واحد ذریعہ تھا۔

اگر حکومت پاکستان اس مسئلے پر سنجیدگی سے عمل نہ کیا تو مسلہ اور سنگین ہوسکتا ہے اور لوگ اس وبا کی بجائے بھوک،افلاس اور عام مریضوں کو ہسپتال نہ پہنچانے کی وجہ سے مر سکتے ہیں۔

اس لیے میں وادی رامان کے تمام لوگوں کی طرف سے وزیر اعظم پاکستان جناب عمران خان صاحب سے درخواست کرتا ہوں کہ وہ ہمارے مسئلے کو حل کرنے کے لئے فوری کارروائی کرے۔

دوم ، چونکہ وزیر اعظم نے غریب عوام کے لئے ہنگامی امداد کا اعلان کیا ہے تو ہم حکومت سے التجا کرتے ہیں کہ وہ وسائل کو ضرورت کی بنیاد پر تقسیم کریں اور ہم  اُس سروے کو مسترد کرتے ہیں جو ماضی میں شہید بے نظیر بھٹو انکم سپورٹ پروگرام کے ماتحت کیا گیا تھا کیونکہ یہ متعصبانہ تھا اور زیادہ تر امیر لوگ اس سے فائدہ اٹھا رہے ہیں۔

اس لیے میں پاکستان کے وزیر اعظم سے التجا کرتا ہوں کہ وہ ہماری صورتحال پر غور کریں اور ہمارے مسائل حل کرنے کے لئے فوری اقدامات کریں                شکریہ۔۔۔!


شیئر کریں: