Chitral Times

Apr 12, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

ملاکنڈ ڈویژن کے تاجر برادری کی تمام ترمسائل ترجیحی بنیادوں پرحل کئے جائینگے..وزیراعلیٰ

Posted on
شیئر کریں:

پشاور(چترال ٹائمزرپورٹ ) وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے کہا ہے کہ صوبے بشمول ملاکنڈ ڈویژن کی تاجر برادری کی تمام تر مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کئے جائیں گے جبکہ ملاکنڈ ڈویژن میں سڑکوں ، رابطہ پلوں ،سبزی منڈی سمیت دیگر انفراسٹرکچر کی تعمیر و بحالی یقینی بنائی جائے گی ۔ اُنہوںنے کہاکہ ملاکنڈ ڈویژن میں محکمہ بلدیات کے نیچے ٹاﺅن کمیٹیاں مکمل فعال بنائی گئی ہیں جبکہ ملاکنڈ ڈویژن کے عوام اور خصوصاً تاجر برادری کو اس ضمن میںدرپیش مسائل کوجلد حل کیا جائے گا۔تاجر برادری کو ہر ممکن ریلیف دیں گے۔ صوبائی حکومت تجارتی سرگرمیاں مزید فعال بنانے کیلئے تمام تر وسائل بروئے کار لا رہی ہے ۔سوات ایکسپریس وے کی تکمیل سے پورے ملاکنڈ ڈویژن میں تجارتی سرگرمیوں کو فروغ ملے گا جبکہ ملاکنڈ کی تاجربرادری بھی ایکسپریس وے بھر پور استفادہ کر سکے گی ۔صوبائی حکومت سیاحتی پالیسی اور سیاحتی بورڈ کی تشکیل میں ملاکنڈ ڈویژن سمیت تمام سٹیک ہولڈرز کو اعتماد میں لے گی ۔ اُنہوں نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت ملاوٹ پر کسی قسم کا سمجھوتہ نہیں کرے گی ، البتہ فو ڈ انسپکیشن کیلئے تمام متعلقہ اداروں کی ایک مشترکہ ٹیم معائنہ کیا کرے تاکہ عوام کو اس حوالے سے مشکلات کا سامنا بھی نہ ہو اور مطلوبہ مقصد بھی حاصل کیا جاسکے ۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ صوبے کے نظام کو ٹھیک کرنے اور عوام کو ریلیف دینے کیلئے اقتدار ملا ہے جبکہ موجودہ صوبائی حکومت پورا نظام ٹھیک کرکے عوام کو تمام تر ریلیف فراہم کرے گی ۔ اُنہوںنے یقین دلایا ہے کہ ملاکنڈ ڈویژن کی تاجر برادری کو وفاقی سطح پر جتنے بھی حل طلب مسائل کا سامنا ہے، ان مسائل کے حل کیلئے متعلقہ فورم پراقدامات لئے جائیں گے ۔ اُنہوںنے کہا ہے کہ ضلع ملاکنڈ میں ٹی ایم اے تمام اُمور کو ریگولیٹ کر رہی ہے جس سے بلدیات کے حوالے سے عوام کے زیادہ تر مسائل جلد حل ہو جائیں گے ۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ ملاکنڈ ڈویژن کیلئے پہلے سے دو پل اے ڈی پی میں شامل کئے گئے ہیں جو ٹینڈرنگ فیز میں ہیں ۔ وہ وزیراعلیٰ ہاﺅس پشاورمیں ضلع ملاکنڈ سے سوات ٹریڈرز فیڈریشن کے صدر عبد الرحیم کی قیادت میں آئے ہوئے تاجربرادری کے ایک وفد سے ملاقات کر رہے تھے ۔ ملاقات میں وزیر زراعت محب اﷲ،ایم پی اے و ڈیڈک چیئرمین سوات فضل حکیم خان، وزیراعلیٰ کے پرنسپل سیکرٹر ی شہاب علی شاہ اور وفد کے دیگر اراکین بھی موجود تھے ۔ وزیراعلیٰ نے ملاکنڈ ڈویژن کی تاجر برادری کو یقین دلایا کہ صوبائی حکومت ان کے تمام تر حل طلب مسائل کے حل کیلئے سنجیدہ اقدامات اُٹھا رہی ہے ۔ تاجر برادری کو مکمل تعاون فراہم کیا جائے گا ۔ ملاکنڈ ڈویژن میں تجارت کے فروغ کیلئے چھوٹے چھوٹے انڈسٹریل زونز کا قیام یقینی بنایا جارہا ہے ۔ اُنہوںنے کہاکہ ان انڈسٹریل زونز کو ویلنگ کے ذریعے سستی بجلی فراہم کی جائے گی ۔ اُنہوںنے کہاکہ بٹ خیلہ ہسپتال کی اپ گریڈیشن ہو گئی ہے ، جس سے وہاں کے عوام کو صحت سہولیات کی فراہمی ممکن ہو ئی ہے جبکہ ملاکنڈ ڈویژن میں ویمن یونیورسٹی کے قیام کی منظوری بھی ہو چکی ہے ۔ اُنہوںنے کہاکہ تیمر گرہ میں پینے کے صاف پانی کی فراہمی کیلئے ایک بڑی واٹر سپلائی سکیم کا قیام بھی ممکن بنایا جارہا ہے ۔ وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ پورے ملاکنڈ ڈویژن کی ترقی و بحالی ترجیحی بنیادوں پر ممکن بنائی جائے گی ۔ اُنہوںنے کہا کہ چکیسرروڈ اور رابطہ پل کو اے ڈی پی میں شامل کیا گیا ہے ، جس کی تعمیر سے وہاں کے عوام کو سفری سہولیات فراہم ہو سکے گی ۔اُنہوںنے کہاکہ ملاکنڈ ڈویژن میں ڈبلیو ایس ایس سی کی کارکردگی مزید بہتر کررہے ہیں جس سے ملاکنڈ ڈویژن کے تمام اضلاع کی صفائی ممکن بنائی جائے گی جبکہ ملاکنڈ ڈویژن میں پیتھم ادارے کی بحالی پر بھی سنجیدگی سے غور کیا جائے گا۔ اس موقع پر ملاکنڈ ڈویژن کی تاجربرادری نے سوات ایکسپریس وے ، ملاکنڈ ڈویژن میں سڑکوں کی تعمیر وبحالی اور شہروں کی خوبصورتی اور تاجربرادری کے مسائل کے حل پر وزیراعلیٰ کا شکریہ ادا کیا جبکہ صوبائی حکومت کو خراج تحسین بھی پیش کیا ہے۔
<><><><><><>

.
وزیراعلیٰ‌سے جاپانی سفیر Mr. Kuninori Matsudaکی خیبرپختونخوا ہاﺅس اسلام آباد میں ملاقات
پشاور(چترال ٹائمزرپورٹ ) وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان سے جاپانی سفیر Mr. Kuninori Matsudaنے خیبرپختونخوا ہاﺅس اسلام آباد میں ملاقات کی ہے ۔ ملاقات میں باہمی دلچسپی کے اُموراور خیبرپختونخوامیں مختلف ترقیاتی منصوبوں پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا ۔اس موقع پر خیبرپختونخوا حکومت اور جاپانی حکومت کے مابین باہمی تعاون پر بھی اتفاق کیا گیا۔ وزیراعلیٰ نے کہا ہے کہ نئے ضم شدہ قبائلی اضلاع میں جائیکا (JICA)کے تعاون سے سڑکوں اور دیگر انفراسٹرکچر کو بہتر کیا جائے گا جس سے قبائلی اضلاع میں سفری سہولیات سمیت تجارتی سرگرمیوں کو فروغ ملے گا۔ اُنہوںنے کہا کہ خیبرپختونخوا میں جائیکا کے تعاون سے 28 ارب روپے کی لاگت سے700 کلومیٹر طویل سڑکوںاور 10 پلوں کی تعمیر ومرمت یقینی بنائی جائے گی جبکہ پلوں سمیت دیہی علاقوں میں سڑکوں کے انفراسٹرکچر کو بھی مزید بہتر کیا جائے گا۔ وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ روڈ انفراسٹرکچر کی مضبوطی سے صوبے میں سیاحتی اور تجارتی سرگرمیاں مزید بڑھیں گی ۔وزیراعلیٰ نے کہاہے کہ پلاننگ کمیشن کی وسطاعت سے صوبے میں سڑکوں کی بحالی و مرمت کا جامع مسودہ جائیکا اور جاپانی سفارتخانے کو پہلے سے ہی بھجوادیا گیا ہے جبکہ جائیکا نے خیبرپختونخوا کے مختلف سیکٹرز میں ترقیاتی سکیموں کیلئے تعاون کی یقین دہانی بھی کرائی ہے ۔ انہوںنے مزید کہاکہ طور خم بارڈرپر انفراسٹرکچر کی بہتری اور 24/7 گھنٹے کھولنے سے صوبے میں تجارتی سرگرمیوں میں بہتری آئی ہے جبکہ صوبائی حکومت وسطی ایشیاءممالک سے تجارتی سرگرمیاں بڑھا رہی ہے، جس سے صوبے کی معیشت مزید مستحکم ہو گی۔روڈ نیٹ ورکس اور دیگر انفراسٹرکچر کی بحالی سے صوبے میں سیاحت اور تجارتی سرگرمیوں کو مزید فروغ ملے گاجبکہ سڑکوں کی تعمیر و مرمت کی بہتری سے کان کنی اور معدنیات کے شعبے میں بھی بہتری آئے گی۔انہوںنے کہاکہ وزیراعظم عمران خان نے سماجی خدمات کی بہتری اور کمیونٹی کی ترقی کیلئے کامیاب جوان پروگرام کا اجراءکردیا ہے جبکہ صوبائی حکومت سماجی خدمات اور صوبے میں کمیونٹی کی ترقی کیلئے اقدامات کررہی ہے ۔صوبائی حکومت کی خصوصی توجہ صوبے میں ملکی اور بین الاقوامی سیاحت کے فروغ پر مرکوز ہے ۔ سیاحت کے فروغ سے صوبے کے محصولات میں خاطر خواہ اضافہ ہو گا۔ وزیراعلیٰ نے خیبرپختونخوا میں ترقیاتی منصوبوں میں جائیکا (JICA)کے تعاون پر جاپانی حکومت کا شکریہ بھی ادا کیا ہے اور اُمید ظاہر کی ہے کہ صوبے کی ترقی کیلئے جاپانی حکومت خیبرپختونخوا حکومت کے ساتھ روابط جاری رکھے گی جبکہ باہمی تعاون کو مزید آگے لیکر جائیں گے ۔ اس موقع پر جاپانی سفیر Kuninori Matsudaنے خیبرپختونخوا میں امن و امان کی بہتر صورتحال پر اطمینان کا اظہارکرتے ہوئے خیبرپختونخوا حکومت کی کاوشوں کی تائید کی ہے جبکہ صوبے میں سیاحت اور تجارتی سرگرمیوں کے فروغ کیلئے اقداما ت پرخیبرپختونخوا حکومت کو سراہا ہے ۔جاپانی سفیر نے عندیہ دیا ہے کہ عنقریب جائیکا کے صدر کا پاکستان دورہ اور وزیراعظم عمران خان سے ملاقات بھی متوقع ہے۔ اس موقع پر صوبائی وزیر ایلمنیٹری اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن اکبر ایوب ،سیکرٹری سی اینڈ ڈبلیو و دیگر بھی وزیراعلیٰ کے ہمراہ تھے ۔
……………..

وزیراعلیٰ‌کی وزیراعظم عمران خان سے ملاقات
پشاور(چترال ٹائمزرپورٹ ) وزیراعظم پاکستان عمران خان سے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے اسلام آباد میں ملاقات کی ہے۔ ملاقات میں ملکی اور صوبہ خیبرپختونخوا کی صورتحال کے حوالے سے تفصیلی تبادلہ خیا ل کیا گیا ہے۔ وزیراعلیٰ محمود خان نے وزیراعظم کو صوبے میں جاری ترقیاتی منصوبوں پر پیش رفت و دیگر امور کے بارے آگاہ کیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے نئے ضم شدہ قبائلی اضلاع میں ترقیاتی منصوبوں، قبائلی عوام کی دیر پا ترقی کیلئے صوبائی حکومت کے اقدامات اور درپیش چیلنجز پر وزیراعظم کو تفصیلی بریفنگ دی جبکہ میگا پروجیکٹس پر پیش رفت اور صوبائی حکومت کی جانب سے صنعت اور سیاحت کے فروغ کے لیے کیے جانے والے اقدامات پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ صوبائی حکومت صوبے میں سیاحت اور صنعت کاری کے فروغ کیلئے عملی اقدامات اٹھا رہی ہے، جس سے صوبہ معاشی طور پر مستحکم ہونے جارہا ہے۔


شیئر کریں: