Chitral Times

Feb 7, 2023

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

فرنٹئیر کنسٹبلری میں کالاش قومیت کیلئے الگ پلاٹوں دینے کیلئے قرارداد اسمبلی سے منظور

شیئر کریں:

چترال (نمائندہ چترال ٹائمز) ایم پی اے وزیر زادہ کی کوششوں سے خیبر پختونخوا اسمبلی میں ایک قرارداد منظور کردی گئی ہے جس میں وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ فرنٹئیر کنسٹبلری میں ضلع چترال میں تین الگ تھلگ وادیوں میں رہائش پذیر کالاش قومیت اور ان وادیوں کی سرحدو میں رہنے والے شیخ قبیلے کے لئے الگ الگ پلاٹون دینے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ ایم پی اے وزیر زادہ خان، ہدایت الرحمن، محمود جان خان، شاہ داد خان، اکرم خان درانی اور دوسروں کے دستخطوں سے پیش کردہ قرار داد میں کہا گیا ہے کہ ان قومیتوں کو الگ پلاٹوں دینے سے ان کی احساس محرومی کا ازالہ ہوجائے گا۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ اس وقت فرنٹئیر کنسٹبلری میں کالاش قبیلے سے تعلق رکھنے والے کوئی بھرتی نہیں ہوسکتے کیونکہ اس فورس میں بھرتی کے لئے سنی اور اسماعیلی کے پلاٹون علیحدہ ہیں اور کالاش ان دونوں کٹیگریوں میں کسی میں نہیں آتا۔ وزیر زادہ نے مقامی میڈیا سے ٹیلی فون پر گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ کالاش اور شیخ قبیلے اس وقت بے روزگاری کے شدید مسائل سے دوچار ہیں اور ایف سی میں الگ پلاٹون مل جانے سے ان کو روزگار کے مواقع فراہم ہونے کے ساتھ ساتھ انہیں اپنے وطن عزیز کی خدمت کا موقع بھی مل جائے گا۔ انہوں نے قرارد اد کی حمایت کرنے پر تمام ارکان اسمبلی کا شکریہ ادا کیا ہے۔
wazir zada mpa chitral kalash minority


شیئر کریں: