Chitral Times

Nov 28, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

پشاور کے نجی ہاسٹل میں مہراب نبی کی پراسرارموت کا معمہ،عدالت کے حکم پرقتل کا مقدمہ درج

Posted on
شیئر کریں:

پشاور(فیاض احمد ) پشاور دلہ زاک روڈ کے نجی ہاسٹل میں کالج کے لیکچرر مہراب نبی ساکن چترال کی لاش برآمد ہوئی تھی دسمبر کے مہینے میں پیش آنے والے واقعہ کے بعد اہل خانہ نے ہاسٹل انتظامیہ کے خلاف ايف آئي آر درج کرنے کا مطالبہ کيا تھا مگر پوليس نے پوسٹ مارٹم رپورٹ ميں زخم کے نشانات واضح ہونے کے باوجود اسے خودکشي کا رنگ ديا اورکالج سربراہ کے خلاف ايف آئي آر درج کرنے سے کتراتي رہي ۔

چترال سے تعلق رکھنے والے ٹيچرمہراب نبي کے بھائي نے انصاف کے لئے عدالت کا دورزاہ کھٹکھٹايا اورپشاورہايئکورٹ ميں پوسٹ مارٹم سميت تمام ثبوت پيش کرديئے ، عدالت نے تمام شواہد ديکھنے کے بعد کالج پرنسپل اوراس کے ڈرايئور کے خلاف ايف آئي آر درج کا حکم ديا ، عدالت نے ريمارکس ديئے کہ زخم کے واضح نشانات کے باجود اسے خودکشي کا رنگ ديا جائے. عدالت نے حکم ديا کہ کالج انتظاميہ کوقتل کيس ميں نامزد کرکے شامل تفتيش کيا جائے ،

عدالتي احکامات پرعمل درآمد کرتے ہوئے تھانہ پہاڑي پورہ ميں ايف آئي آر درج کرليا گيا جس ميں کالج پرنسپل بلال اور ڈرايئور افضل کو نامزد کيا گيا ،مقتول کے بھائي غلام نبي نے بتايا کہ ميرے بھائي کے جسم پر تین جگہوں پر نشانات پائے گئےتھے مگرپھر بھي اس کو خودکشي کا نام ديا گيا ،لواحقين نے الزام لگايا کہ پولیس ہمارے ساتھ کوئی تعاون نہیں کررہی انہوں نے آئی جی پولیس اور وزیراعلی خیبرپختونخوا سے قاتلوں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ بھي کیا.

mehrab nabi murder case registered 1
mehrab nabi murder case registered 3

mehrab nabi murder case registered 4

 


شیئر کریں: