Chitral Times

Oct 15, 2018

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

  • لہو کا خراج ……. شہدائے چترال کا مختصر تعارف( قسط دوم )…….اقرارالدین خسرو

    September 8, 2018 at 7:41 pm

    گزشتہ مضمون میں چترال سے تعلق رکھنے والے چترال سکاؤٹس کے بعض شہداء کا مختصر تعارف شیر کیا تھا۔ بقایا کا مختصر تعارف آج ملاحظہ فرمائے ۔۔ (یاد رہے 1947 سے 2012 تک شہداء کی ڈیٹیل موجود ہے 2012 کے بعد کے شہداء کا تعارف چند ایک کے علاؤہ حاصل نہ کرسکا جس کیلیے پیشگی معزرت )
    = سپاہی ولید احمد موڑکہو جائے شہادت سیاچن 09 دسمبر 2006
    نائیک جان خان یارخون جائے شہادت سوات
    چترال سکاؤٹس کے کچھ جوان 7 اور 8 جنوری 2008 کی رات برفانی تودہ کے نیچے دب کر شہید ہوگیے ۔ ان میں
    حوالدار نیاب گل سکنہ کوشٹ
    حوالدار ظفر شاہ ورکوپ (تورکہو )
    نائیک مختار احمد کوغذی
    سپاہی اشرف شاہ ریچ تورکہو
    سپاہی محسن علی چرون
    سپاہی محراب الدین سانیک لٹکوہ
    جبکہ سپاہی حاجی رحمت سکنہ پرئیت اس واقعے میں بچ گیے تھے ۔ مگر 06 نومبر 2008 کو سوات کے کانجو پل میں خودکش حملے میں سپاہی امتیاز احمد سکنہ اویون کے ہمراہ شہید ہوگیے ۔۔۔
    = لانس نائیک قدیر خان زائینی موڑکہو جائے شہادت سوات 37 اکتوبر 2008
    = حوالدار بزرگ محمد موری بالا جائے شہادت سوات 08 مئی 2008
    چترال سکاؤٹس کے کچھ جوان 26 اپریل 2009 میں دیر میدان آپریشن کے دوران شہید ہوے ان میں ۔۔۔
    نائب صوبیدار نصیراللہ سکنہ برنس
    سگنل لانس نائک بشیر احمد سکنہ ریشن
    سپاہی عجایب خان مومی لٹکوہ
    سپاہی بشیر احمد سکنہ ورکوپ تورکہو
    سپاہی امان الرحمن سوئیر دروش
    سپاہی شیر نواز شاگرام تورکہو
    سپاہی شیر اعظم سین چترال
    سپاہی بہادر شاہ ورکوپ تورکہو
    نائیک رحمت جوان موغ لٹکوہ 26 مئی دیر میدان
    سپاہی ژانویار کلدام دروش 26 مئی دیر میدان
    لانس نائیک شاہ حسین تاریخ شہادت 7 مئی 2009 دیر میدان
    سپاہی فرزند علی شاہ چرون 26 مئی 2009 دیر میدان
    نائک میر حکیم سکنہ بونی تاریخ شہادت 04 جون 2009
    سپاہی شہزاد رحیم سکنہ زئیت جائے شہادت سوات 19 جون 2009
    سپاہی گل زاہد سکنہ عشریت جائے شہادت باجوڑ ایجنسی یکم دسمبر 2009
    نائب صوبیدار ظفر مراد ژانگ لشٹ شاگرام جائے شہادت درہ آدم خیل 14 جنوری 2010
    سپاہی فہیم الدین انداہتی شغور جائے شہادت باجوڑ ایجنسی 23 جنوری 2010
    سپاہی نور احمد سکنہ موردیر جائے شہادت باجوڑ ایجنسی 24 فروری 2010
    سپاہی شفیق الرحمن تیریچ جائے شہادت ارندو
    24 جون 2010
    سپاہی صابر احمد سکنہ برنس جائے شہادت باجوڑ ایجنسی 5 فروری 2011
    سپاہی لطیف الرحمن سکنہ اڑیان دروش 16 مئی 2011
    نائیک رحمت اکبر سکنہ راغ جائے شہادت نواپاس 18 اکتوبر 2011
    27 اگست 2011 27 رمضان کو افغان بارڈر سے آئے ہوے دہشت گردوں نے ارندو سیکٹر کے گدیبار، کوتی ، دراشوت لنگور بٹ اور فامیل نسار پوسٹوں پہ حملہ کیا جس میں چترال سکاؤٹس کے درجنوں جوان شہید ہوے جنکی تفصیل کچھ یوں ہے ۔
    صوبیدار یونس علی سکنہ برنس کاوتی پوسٹ
    صوبیدار نیت غازی دراشوت پوسٹ
    حوالدار جلال الدین تیریچ دراشوت پوسٹ
    حوالدار بجگی خان بنگ یارخون گدیبار پوسٹ
    نائیک نزیر احمد سکنہ تیریچ گدیبار پوسٹ
    نائیک منظور الٰہی بکر آباد دراشوت پوسٹ
    لانس نائیک رحمت نظار خان لنگوربٹ پوسٹ
    سپاہی حضرت اللہ کوغذی گدیبار پوسٹ
    سپاہی شیر اکبر سانیک لٹکوہ گدیبار پوسٹ
    سپاہی علی حیدر سندراغ کوشٹ لنگور بٹ پوسٹ
    سپاہی حضرت عمر عشریت دراشوت پوسٹ
    سپاہی ہاشم پناہ جنالی کوچ دراشوت پوسٹ سپاہی رحمت صاحب خان مستوج دراشوت پوسٹ
    سپاہی ضیاء الملک دروش دراشوت پوسٹ سپاہی امیر ظفر خان اویون لنگوربٹ پوسٹ
    سپاہی طارق محمود مژگول گدیبار پوسٹ
    لانس نائیک اظہر ولی خان جغور دراشوت پوسٹ
    سپاہی عطاء الرحمن اوچ گرم چشمہ دراشوت پوسٹ
    سپاہی محمد شعیب شیشی کوہ دراشوت پوسٹ
    سپاہی شیر احمد لاوی دروش دراشوت پوسٹ
    سپاہی فقیر بشقیر لٹکوہ جسے 27 اگست کو دہشت گرفتار کرکے لے گیے تھے ساڑھے تین ماہ دہشت گردوں کی قید میں رہے 5 دسمبر 2011 کو اسکی سربریدہ لاش دراشوت کے قریب برآمد ہوئی ۔
    سپاہی جاوید اقبال عشریت جائے شہادت اورکزئی ایجنسی 22 جون 2010
    سپاہی سجاد حسین سیر دور کلکٹک جائے شہادت اورکزئی ایجنسی 28 مئی 2011
    نائک عبدالکریم سکنہ لاسپور جائے شہادت درہ آدم خیل 26 جون 2012
    سپاہی عتیق لشٹ شیشی جائے شہادت کرم ایجنسی 10 مئی 2013
    حوالدار زاکر حسین سکنہ کوشٹ اور لانس نائک انور علی سنوغر جائے شہادت شمالی وزیرستان 18 نومبر 2016
    لانس نائک شیر اللہ سکنہ برنس جائے شہادت نواپاس باجوڑ ایجنسی 10 مئی 2017 ۔۔۔
    اللہ تعالیٰ سے دعاء ہے کہ تمام شہداء کی شہادت قبول فرمائے اور انھیں جنت الفردوس میں اعلی مقام عطاء فرمائے ۔۔ آمین

  • error: Content is protected !!