Chitral Times

Nov 13, 2018

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

  • شکوہ ادیب…………..ادیبہ ایوب

    April 8, 2018 at 10:18 pm

    کیوں میری زندگی میں دشواریاں مولا
    کیوں ہر کوی میری اشکوں کی طلب گار مولا

    کیوں آنکہوں میں ہر پل اشک سجے رہتے ہے
    کیوں ہر کوی بنتا ہے جفا کار مولا

    کیوں چہیں لیتے ہے مجہ سے ابتسام میری
    کیوں ہر دل میرےلۓ ریگزار مولا

    کیوں ہے مجہ پر غموں کی بوجہ ہر وقت
    کیوں کوی نہیں میرا غم خوار مولا

    کیوں ملتے نہیں چارہ ساز یہاں پہ
    کیوں ہر کوی سمجہتا ہے گنہگار مولا

    کیوں لمہے بہر کی پیار کوی دے نہیں پاتا
    کیوں کر جاتے ہے ساری عمر بے قرار مولا

    کیوں طلب ہے اپنوں کی خشیوں کی
    کیوں ہیں اپنے مجہ سے یوں بےزار مولا

    کیوں بے رخی اپنے مانتے ہی نہیں
    کیوں مجہ کو ہی ٹہراتے ہے خطاکار مولا

    کیوں بن کے مسیہاۓ ادیب شکستہ دل رہتی ہے
    کیوں گردشِ افلاک کے پہناتے دستار مولا

  • error: Content is protected !!