Chitral Times

Nov 27, 2021

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

بجلی شیڈنگ کے خلاف خواتین کی احتجاجی مظاہرہ کے خلاف درج مقدمہ کافیصلہ عوام کی جیت ہے۔خدیجہ

شیئر کریں:

چترال ( نمائندہ چترال ٹائمز ) عوامی نیشنل پارٹی ملاکنڈ ڈویژن کے جوائنٹ سیکریٹری اور صوبائی کونسل کے ممبر خدیجہ سردار نے کہا ہے کہ انھوں نے پہلی مرتبہ خواتین کو لیکر چترال کے عوام کی حقوق کیلئے آواز اُٹھائی تھی ۔ جو حق او ر سچ کی آواز تھی یہی وجہ ہے کہ آج چترال کی عدالت نے ہمارے حق میں فیصلہ دیکر یہ ثابت کردیا کہ ہم حق پر تھے۔ چترال ٹائمز سے گفتگو کرتے ہوئے انھوں نے بتایا کہ دو سال پہلے انھوں نے دیگر خواتین کو لیکر جغورکے مقام پر بجلی کی ناروا لوڈ شیڈنگ کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا تھا۔ جبکہ ان کے مخالفین نے ان کے خلاف پولیس میں سڑک بند کرنے کے الزام میں ایف آئی آر درج کروائے تھے۔ جو کہ انسانی حقوق کے خلاف ورزی تھی جبکہ ہم نے انسانی حقوق پامال ہونے کی وجہ سے احتجاج کئے تھے۔ انھوں نے بتایا کہ گزشتہ آٹھارہ دنوں سے اسلام آباد میں سینکڑوں افراد سڑک بلاک کرکے دھرنے میں بیٹھے ہوئے ہیں مگر ان کے خلاف ابھی تک کوئی قانونی کاروائی نہیں ہوئی ہے ۔ جبکہ ہم نے صرف ایک گھنٹہ روڈ پر احتجاج کیا تو قانون کے گرفت میں آئیے۔ تاہم ہمیشہ حق اور سچ کی جیت ہوتی ہے۔ یہی ہوا کہ آج ہم سول جج کی عدالت سے باعزت طور پر بری ہوگئے۔ جوکہ ہمارے مخالفین کی ناکامی اور چترال کے عوام کی جیت ہے۔ انھوں نے مذید کہا کہ میں چترال کے عوام کی حقوق کیلئے آئندہ بھی لڑتی رہونگی ۔


شیئر کریں: