Chitral Times

19th November 2017

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

  • پاک آرمی کے زیر انتظام یوم آزای اور آمن کے حوالے سے موٹر سائیکل ریلی

    October 16, 2017 at 9:48 pm

    چترال ( نمائندہ چترال ٹائمز ) پاک آرمی کے زیر انتظام یوم آزادی اور امن کے حوالے سے موٹر سائیکل ریلی نے چترال سے پیر کے روز سے اپنے سفر کا آغاز کیا ۔ جو شندور اور گلگت کے راستے خنجراب سے آنے والی ریلی کے ساتھ اسلام آباد پہنچے گا ۔ ریلی میں پاکستان کے مختلف شہروں سے تعلق رکھنے والے موٹر سائکلسٹ شامل ہیں ۔ موٹر سائیکل ریلی کو رخصت کرنے کے موقع پر چترال سکاؤٹس سٹیڈیم میں ایک شاندار تقریب ہوئی ۔ جس میں کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس کرنل معین الدین ،ڈی پی او چترال علی اکبر دیگر آفیسران آرمی پبلک سکول کے طلباء و طالبات ، خواتین اور اساتذہ کی بڑی تعداد موجود تھی ۔ اس تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس کرنل معین الدین نے کہا ۔ کہ اقبال رحمت اللہ علیہ نے کہا تھا ۔ کہ محبت مجھے اُن جوانوں سے ہے ۔ ستاروں پہ جو ڈالتے ہیں کمند ۔ آج نوجوانوں پر مشتمل یہ قافلہ ستاروں پر کمند ڈالنے نکلاہے ۔ اور چترال کا بچہ بچہ انہیں خوش آمدید کہ رہا ہے ۔ انہوں نے نوجوانوں کی مہم جوئی کو لہو گرم رکھنے کیلئے انتہائی ضروری قرار دیا ۔ اور کہا کہ اسی طرح پلٹ کر جھپٹنے والے نوجوان پاکستان کا سرمایہ ہیں ۔ اور قوم ان جیسے نوجوانوں پر فخر کرتی ہے کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس نے اس امید کا اظہار کیا ۔ کہ ریلی میں شریک موٹر سائکلسٹ چترال اور گلگت میں پاکستان کی عظمت اور امن کے حوالے سے پیغام کو اُجاگر کرتے ہوئے اپنی منزل تک پہنچ جائیں گے ۔ اس موقع پر ڈی پی او چترال علی اکبر نے خطاب کرتے ہوئے کہا ۔ کہ چترال ایک جنت ہے اور یہ جنت یہاں کے بچوں کی وجہ سے ہے ۔ چترال کے باسی امن اور خلوص بانٹنے والے لوگ ہیں ۔ اور اپنے وطن سے بے پناہ محبت کرتے ہیں ۔ انہوں نے ریلی میں شریک نوجوانوں کو اس مہم جوئی پر خراج تحسین پیش کیا ۔ اور اپنی طرف سے و تمام شرکاء کی طرف سے نیک تمناؤں کا اظہار کیا ، اس موقع پر کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس ریلی میں شامل نوجوانوں سے فرداً فرداً ملے ، اور چترال سکاؤٹس کی طرف سے کیپ پہنائے ۔ تقریب کے موقع پر سکاؤٹس سٹیڈیم طلباءء اور طالبات سے کھچا کھچ بھر اہوا تھا ۔ بعد آزان پاکستان زندہ باد کے نعروں کی گونج میں موٹر سائیکل ریلی کے شرکاء کو رخصت کیا گیا ۔ سکول کی بچے بچیوں کی بڑی تعداد نے سڑک کے دونوں سائڈوں پر کھڑے جھنڈیاں لہراتے ہوئے فلگ شگاف نعرے لگائے ۔ جس سے چترال کی وادی گونج اُٹھی ۔ ریلی پیر کے روز مستوج میں قیام کرے گی ۔ اور منگل کے روز مستوج سے گلگت کیلئے روانہ ہوگی ۔

     

  • error: Content is protected !!