Chitral Times

Jul 18, 2024

ﺗﻔﺼﻴﻼﺕ

گورنرحاجی غلام علی کی سرحد یونیورسٹی آف سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کے 16ویں سالانہ کانووکیشن میں بحیثیت مہمان خصوصی شرکت، طلباء و طالبات میںڈگریاں تقسیم،68 طلباء و طالبات کو گولڈ میدلز پہنائے

شیئر کریں:

گورنر خیبر پختونخوا حاجی غلام علی کی سرحد یونیورسٹی آف سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کے 16ویں سالانہ کانووکیشن میں بحیثیت مہمان خصوصی شرکت، 337 طلباء و طالبات میں ڈگریاں تقسیم،68 طلباء و طالبات کو گولڈ میدلز پہنائے

جدید ٹیکنالوجی پر مبنی تعلیم کے ساتھ ساتھ نوجوانوں کی زہن سازی و تربیت انتہائی ضروری ہے، حاجی غلام علی

تعلیم یافتہ نوجوانوں کو صوبہ کے قدرتی وسائل کے درست استعمال کیلئے تحقیق کرنی ہے، گورنر

گورنر کا سرحد یونیورسٹی آف سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کو ضم اضلاع کے طلبہ کیلئے 80 اسکالرشپس دینے کابھی اعلان

پشاور ( چترال ٹائمز رپورٹ ) گورنرخیبرپختونخوا حاجی غلام علی نے کہاہے کہ جدید ٹیکنالوجی پر مبنی تعلیم کے ساتھ ساتھ نوجوانوں کی ذہن سازی و تربیت انتہائی ضروری ہے،تعلیم یافتہ نوجوانوں کو صوبہ کے قدرتی وسائل کے درست استعمال کیلئے تحقیق کرنی ہوگی، طلبہ نے اپنی تعلیمی ویژن و تحقیق سے صوبہ کی ترقی و خوشحالی کیلئے کردار اداکریں۔ نجی شعبے نے بھی تعلیم و تدریس کے مقدس کام میں حکومت کا بھر پور ساتھ دیا ہے، ہمیں ملک وقوم کی ترقی وخوشحالی کیلئے اور زیادہ فراخ دلی کے ساتھ تعلیم کے شعبے میں سرمایہ کاری کرنی ہوگی۔ ان خیالات کا اظہارانہوں نے پیرکے روز سرحد یونیورسٹی آف سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کے 16ویں سالانہ کانووکیشن 2023سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا۔ کانووکیشن میں وائس چانسلر سرحد یونیورسٹی آف سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی پروفیسر ڈاکٹر سلیم الرحمان،نائب صدر سرحد یونیورسٹی عظمت علی، رجسٹرار، فیکلٹی اراکین، امتیاز حسین گیلانی، وائس چانسلر اسلامیہ کالج یونیورسٹی پروفیسر ڈاکٹر گل مجید، سینٹ و سنڈیکیٹ کے ممبران سمیت طلباء و طالبات اور اُن کے والدین نے شرکت کی۔

 

گورنر نے کانووکیشن میں مختلف مضامین میں بیچلر، ماسٹر، ایم فل, پی ایچ ڈی کی تعلیم مکمل کرنیوالے 337 طلباء و طالبات میں ڈگریاں تقسیم کیں جبکہ تعلیمی میدان میں نمایاں پوزیشن حاصل کرنیوالے 68 طلباء و طالبات کو گولڈ میدلز پہنائے۔گورنر نے اس موقع پر سرحد یونیورسٹی آف سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی کو ضم اضلاع کے طلبہ کیلئے 80 اسکالرشپس دینے کابھی اعلان کیا۔ تقریب میں وائس چانسلر سرحد یونیورسٹی آف سائنس اینڈ انفارمیشن ٹیکنالوجی پروفیسر ڈاکٹر سلیم الرحمان نے گورنر اوردیگر مہمانوں کا خیرمقدم کیا اور گورنر کو ادارہ کی سالانہ کارکردگی رپورٹ بھی پیش کی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے گورنر نے تعلیمی کامیابی حاصل کرنیوالے طلباء و طالبات، والدین، فیکلٹی اراکین کو مبارکباددی اورطلباء پر زوردیا کہ عملی زندگی میں چیلینجزکا مقابلہ کرنا ہوگا۔دنیا میں وہی قومیں کامیاب ہوتی ہیں جو مستقبل کا سوچتی ہیں اورریسرچ کرتی ہے۔گورنرنے کہاکہ ہمارے نوجوان ہمارا مستقبل اور آپ نوجوانوں نے ہی ملک و قوم کا مستقبل بہتر بنانا ہے۔ہمارے نوجوان قابلیت میں کسی سے کم نہیں صرف انہیں درست رہنمائی کی ضرورت ہے۔ نوجوانوں نے ہی ریاست اورریاستی اداروں، ملک و قوم کیلئے عزت و وقار کا باعث بننا ہے اور ریاست وریاستی اداروں کے خلاف سوچ اور پروپیگنڈے کی نفی کرنی ہوگی۔گورنرنے فیکلٹی پر بھی زوردیا کہ وہ اپنی تمام تر صلاحیتوں کو طلباء کی تعلیم،ریسرچ اور اُن کی کردار سازی کے لیے وقف کردیں اور تعلیم کے ساتھ ساتھ اُن کی بہترین تربیت بھی کریں۔

 

گورنرنے یونیورسٹیوں پر زوردیا کہ وہ جدید ریسرچ کو فروغ دیں تاکہ ملکی پیداوار میں اضافہ، صنعتی وتجارتی ترقی اوربے روزگار ی کاخاتمہ ممکن ہوسکے۔ انہوں نے کہاکہ موجودہ دور میں کسان ایک ایکڑ سے 15-20 من جبکہ دنیا 75 من تک گندم حاصل کررہاہے۔ ہمیں بھی جدید ٹیکنالوجی کو نہ صرف اپناناہوگا بلکہ اپنے کسانوں کو منتقل کرنا اور انہیں صحیح طریقے سے استعمال میں لاناہوگا۔ گورنرنے سرحد یونیورسٹی کی جانب سے سماجی بہبود کے کاموں اور تعلیم عامہ کو بھی اپنے مقاصد میں شامل کرنے، نصابی تعلیم کیساتھ ساتھ سرحد یونیورسٹی کے طلباء کو ادبی تقریبات کھیلوں اور سماجی بہبود کے کاموں کیلئے مناسب وقت دینے اور فاصلاتی نظام تعلیم کے ذریعے مختلف شعبوں میں ڈگری کی سطح تک تعلیم کا انتظام کرنے پر یونیورسٹی کی انتظامیہ کوخراج تحسین بھی پیش کیا۔ گورنرنے کہاکہ پبلک سیکٹرزیونیورسٹیوں کے ساتھ نجی تعلیمی اداروں کے طلباء کے مشکلات کے حل کیلئے بھی اقدامات اٹھائے جارہے ہیں۔وفاقی حکومت اور ہائرایجوکیشن کمیشن طلباء میں لیپ ٹاپ تقسیم کررہی ہے تاکہ طلباء کو تعلیم کے حصول میں آسانی ہو۔

علاوہ ازیں گورنر سے ضلع ہری پور کے علاقہ تناول ویلج کونسل کلنجر کے منتخب بلدیاتی نمایندوں کے ایک وفد نے اعظم عباسی کی قیادت میں ملاقات کی۔وفد میں صغیراحمد، محمدشفیق اوردیگر شامل تھے۔وفد کے شرکاء نے گورنر کو بلدیاتی نمائندوں اور عوام علاقہ کو درپیش مسائل سے تفصیلی طور پر آگاہ کیا اور ان مسائل کے حل کیلئے کردار ادا کرنے کی درخواست کی۔گورنر نے وفد کے شرکاء کو مسائل کے حل کیلئے اپنی جانب سے مکمل تعاون کایقین دلایا۔دریں اثناء گورنر سے ہری پورچیمبرکے خورشید اعظم خان نے بھی گورنرہاوس میں ملاقات کی۔ اس موقع پر سابق معاون خصوصی ملک مہرالہی اور ہری پور کی تاجربرادری کے نمائندے بھی موجود تھے۔ ملاقات میں مختلف امور پر تبادلہ خیال کیاگیا۔

chitraltimes governor kp addressing sarhad university 1


شیئر کریں:
Posted in تازہ ترین, جنرل خبریںTagged
82890